امریکہ نے روہنگیا مسلمانوں کے اجتماعی قتل کے ذمہ دار میانمار کے فوجی سربراہ سمیت چار جنرلوں پر پابندی لگا دی

واشنگٹن: امریکہ نے روہنگیا مسلمانوں کے اجتماعی قتل پر میانمار کے کمانڈر انچیف اور ڈپٹی کمانڈر انچیفف سمیت چار اعلیٰ فوجی جنرلوں پر پابندیاں عائد کر دیں۔

یہ چاروں کمانڈر انچیف مین آنگ ہلینگ اور ڈپتی کمانڈر انچیف سوئے وین اور ان کے دو دیگر معاونین روہنگیا مسلمانوں کو قتل کے مرتکب پائے گئے۔

امریکہ کے وزیر خارجہ مائیک پومپیو نے کہا کہ یہ چاروں میانمار کے شمالی راخین صوبہ میں مسلم روہنگیا اقلیت کے نسلی صفایہ مہم میں ماؤرائے عدالت ہلاکتوںمیں ملوث ہیں اور ایسا کر کے وہ حقوق انسانی کی وسیع پیمانے پر خلاف ورزی کے مرتکب ہوئے ہیں۔ان پابندیوں کے بعد یہ چاروں اور ان کے بیوی بچے امریکہ میں داخل نہیں ہو سکتے۔

امریکی وزارت خارجہ نے کہا کہ بڑے افسوس کے ساتھ یہ کہنا پڑ رہا ہے کہ برما کی حکومت نے حقوق انسانی کی پامالی اور خلاف ورزی کرنے والوں کا احتساب نہیں کیا اور یہ خبریں متواتر مل رہی ہیں کہ برمی فوج حقوق انسانی کی مسلسل خلاف ورزی کر رہی ہے اور اگست2017سے 7لاکھ روہنگیا مسلمان برما سے نقل مکانی کرنے پر مجبور کر دیے گئے۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Us sanctions top myanmar generals over killings of rohingya in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News
What do you think? Write Your Comment

Leave a Reply

Your email address will not be published.