امریکہ نے سفارت کاروں اور فوجی عملہ کے کنبوں کو جنوبی ترکی چھوڑنے کا حکم دیا

واشنگٹن:امریکی وزارت خارجہ اور پنٹاگون نے امریکی سفارت کاروں اور فوجی اہلکاروں کے کنبوں کو حکم دیا ہے کہ سیکورٹی کے خدشات کے پیش نظر وہ جنوبی ترکی سے چلے جائیں ۔اے پی کی رپورٹ کے مطابق امریکہ کا یہ اقدام پورے ترکی میں بڑھتی تشویشوں کے درمیان کیا گیا ہے اور اس کے ساتھ ہی جنوبی ترکی میں حملوں کے بڑھتے خطرے سے امریکیوں کو آگاہ کرتے ہوئے ان کو سفر کرنے سے گریز کرنا کا بھی انتباہ دیا گیا ہے۔وزارت خارجہ اور پنٹاگون نے کہا کہ آدانا قونصل خانہ اور اینجر لیگ فضائیہ اڈے اور دو دیگر مقامات سے امریکی عملہ کے اہل و عیال کو نکل جانا چاہئے۔
وزارت خارجہ کے ایک بیان کے مطابق غیر ملکی اور امریکی سیاح بین الاقوامی اور مقامی دہشت گرد تنظیموں کا خاص طور پر نشانہ بنتے ہیں۔ اس لیے امریکی شہریوں کو یادہانی کرائی جاتی ہے کہ وہ اپنی اور اپنے بیوی بچوں کوتحفظ بہم پہنچانے کے اقدام کریں اور ہمہ وقت چوکنا رہیں۔ایک بیان میں امریکی یورپی کمان نے کہا کہ ان اقدامات سے خطہ میں سیکورٹی کے مستقل خدشات کے باعث ان علاقوں سے بیوی بچوں کی بحفاظت واپسی ہو سکے گی۔یہ حکم ایسے وقت میں جاری کیا گیا ہے جب ترکی کے صدر رجب طیب اردوغان جمعرات اور جمعہ کو واشنگٹن میں ہونے والی جوہری سربراہ کانفرنس میں شرکت کے لیے امریکہ روانہ ہو چکے ہیں۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Us orders army diplomatic families out of south turkey in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News

Leave a Reply