شام میں کردوں کو اسلحہ فراہمی کے امریکی فیصلہ پر ترکی کا امریکہ کو انتباہ

انقرہ:امریکہ کے نئے صدرر ڈونالڈ ٹرمپ کے گدی نشین ہونے کے بعد پہلی بار دو ناٹو طاقتوں ترکی اور امریکہ میں اس وقت سفارتی ٹکراؤ ہو گیا جب ترکی نے امریکا کو خبر دار کرتے ہوئے کہا کہ امریکا کی جانب سے شام میں کرد جنگجوؤں کو اسلحہ کی فراہمی کا اعلان ناقابل قبول ہے۔غیر ملکی میڈیا کے مطابق ترکی کے نائب وزیراعظم نورتین کنکلی نے امریکا کی جانب سے کرد جنگجوؤں کو اسلحہ کی فراہمی کے اعلان کے بارے میں کہا ہے کہ کرد جنگجوؤں کو مسلح کرنا ناقابل قبول ہے کیوں کہ وہ ترک ریاست کی سالمیت کے خلاف ہیں اور ترکی ہرگز دہشت گرد تنظیموں کو اسلحہ کی فراہمی برداشت نہیں کرے گا۔
انہوں نے کہا کہ ہمیں یقین ہے کہ امریکی انتظامیہ کرد جنگجوؤں کو اسلحہ کی فراہمی کے حوالے سے اپنے فیصلے پر نظرثانی کرے گی۔واضح رہے کہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے 8 مئی کو کرد جنگجوؤں کیلئے احکامات جاری کیے گئے تھے کہ شامی علاقے رقہ میں لڑنے والے کرد جنگجووں کو اسلحہ کی فراہمی کی جائے۔امریکہ کے اس فیصلہ پر ترک صدر رجب طیب اردوغان ، ترک وزیر اعظم اور اعلیٰ سفارت کار کی جانب سے یہ مذمت اس ماہ کے اواخر میں ڈونالڈ ٹرمپ اور ان کے ترک ہم منصب کے درمیان بالمشافہ گفتگو سے پہلے کی گئی ہے۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: us decision to arm kurds in syria poses threat to turkey says ankara in Urdu | In Category: دنیا  ( world ) Urdu News
Tags: , ,

Leave a Reply