ترک وزیر اعظم شام کے حالات پر تبادلہ خیال کے لیے جمعہ کو ایران جائیں گے

انقرہ: ترک وزیر اعظم احمد داو¿د اوغلو خطہ بشمول شام کی تازہ ترین صورت حال اور دو طرفہ تعلقات پر تبادلہ خیال کے لیے جمعہ کو ایران کا سرکاری دورہ کریںگے۔ دورے کے ایجنڈے کے مطابق طرفین دو طرفہ تعلقات کے علاوہ علاقائی تنازعات خاص طور پر شام کی پانچ سال سے جاری جنگ پر تبادلہ خیال کریں گے۔
واضح رہے کہ ترکی اور ایران شام میں جنگ کے حوالے سےمختلف نظریات کے حامل ہیں۔ترکی باغیوں کی پشت پناہی کرتے ہوئے اس پر مصر ہے کہ صدر بشار الاسد شام کے مسقبل کا جزو نہیں ہونے چاہئیں۔ ایران کا اصرار ہے کہ اسد کے مستقبل کا فیصلہ شامی عوام کریں گے اور وہ شام فوج اور اس کے اتحادی انتہاپسندوں کی حمایت کرتا ہے۔
داؤد اوغلو کا مجوزہ دورہ 9مارچ کو سوئزر لینڈ میں ہونے والے آئندہ مرحلہ کے شامی امن مذاکرات کے پیش نظر نہایت اہمیت کا حامل سمجھاجارہا ہے۔یہ دورہ کافی نازک موقع پر بھی کیا جارہا ہے۔ کیونکہ ترکی اور سعودی عرب نے حال ہی میں شام میں بری فوج کی ممکنہ تعیناتی کے منصوبے کا اعلان کیا ہے جس سے ایران نے اس خدشہ کا اظہار کیا ہے کہ اس سے معاملہ سنبھلنے کے بجائے اور بے قابو ہو جائے گا اور جنگ وسعت اختیار کر لے گی۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Turkeys pm discuss syrias situation in tehran on friday in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News

Leave a Reply