ترکی میں سی ایچ پی نے اردوغان کے مقابلہ میں ایک ٹیچر کو امیدوار بنایا

انقرہ: ترکی کی سب سے بڑی حزب اختلاف ریپبلکن پیپلز پارٹی (سی ایچ پی)جمعہ کو اپنے نہایت ممتاز اور فعال قانون ازوں میں سے ایک محرم انسی کو 24جون کو ہونے والے اچانک صدارتی انتخابات میں صدررجب طیب اردوغان کو اپنا امیدوار بنایا ہے۔ سیکولر جماعت سی ایچ پی نے ، جو اردوغان کے 15سالہ دور اقتدار میں ایک بار بھی اردوغان کے خلاف اپنے کوئی امیدوار کانمیاب نہیں کراسکی، اس بار ہائی اسکول کے ایک54سالہ فزکز ٹیچر محرم انسی کو اپنا امیدوار بنایا ہے۔محرم انسی نے انقرہ میں ، جہاں پارٹی لیڈر کمال کسیڈر گولو نے ان کا تعارف کرایا تھا، جھنڈا لہراتے ہزاروں حامیوں سے کہا کہ وہ ہر شخص کے صدر ہیں ، غیر جانبدار صدر ہیں۔اور یہ آزمائشی دور 24جون کو ختم ہو جائے گا۔

Title: turkeys main opposition nominates combative e teacher to challenge erdogan | In Category: دنیا  ( world )

Leave a Reply