الرقہ پر قبضے کے لئے ترکی امریکہ کا کسی بھی حد تک ساتھ دینے تیار

استنبول:شام میں دولت اسلامیہ فی العراق و الشام (داعش) کے ایک مضبوط گڑھ پر قبضے کے لئے امریکہ کی طرف سے کسی بھی پہل میں حمایت دینے کے لئے ترکی ہمہ وقت تیار رہے گا۔
یہ اظہار خیال تر کی کےصدر طیب اردوگان نے آج کیا۔ شام میں ترک فوجی دستوں کی طرف سے جہادیوں کو مزید علاقوں سےکھدیڑے جانے کے سلسلے میں اپنے تبصرے میں صدر طیب اردوگان نے یہ اظہار خیال کیا۔ ترکی کے روزنامہ اخبار حریت کے بدھ کو شائع ہونے والے شمارہ کے مطابق ترک صدر طیب اردوگان نے کہا کہ امریکی صدر بارک اوبامہ نے چین میں جی-20 کی سربراہ کانفرنس کے دوران دونوں لیڈروں کی ملاقات میں الرقہ پر قبضے کے لئے ترکی کے ساتھ مشترکہ مہم چلانے کا خیال ظا ہرکیا تھا۔
ترکی نے شمالی شام میں 24 اگست کو اپنے سرحدی علاقوں سے داعش کے جنگجوؤں کو مار بھگانے کے لئے خصوصی فوجی مہم کا آغاز کیا تھا، جہاں ان کا ہدف وائی پی جی کے کرد جنگجوؤں کو بھی مزید علاقوں پر قبضے سے باز رکھنا تھا۔ چین سے واپس لوٹتے ہوئے طیارے پر مسٹر طیب اردوگان نے صحافیوں سے کہا کہ”مسٹر اوبامہ خاص طورپر الرقہ کے سلسلے میں کوئی مشترکہ اقدام کرنا چاہتے ہیں“۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Turkey ready to join us against isis in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News

Leave a Reply