جب سے امریکہ جوہری معاہدے سے نکلا ہے ایران میں شورش بپا ہے: ڈونالڈ ٹرمپ

واشگٹن: امریکی صدر ڈونالڈ ٹرمپ نے پر زور انداز میں کہا کہ جب سے وہ بین الاقوامی معاہدے سے نکلے ہیں اریان میں ملک گیر پیمانے پر ہنگامے ہو رہے ہیں اور امریکہ ایران میں حکومت مخالف مظاہرین کی حمایت کرتا ہے۔

ہلسنکی میں روسی صدر ولادمیر پوتین کے ساتھ سربراہ اجلاس کے بعد انٹرویو دیتے ہوئے ٹرمپ نے کہا کہ روس اب بھی جوہری معاہدے میں شامل ہے کیونکہ اس کے ایران سے تجارتی اور دیگر نوعیت کے تعلقات ہیں اس لیے یہ معاہدہ امریکہ کے مفاد میں ہے۔لیکن یہ معاہدہ ہماے یا دنیا کے حق میں مفید نہیں تھا ۔اور ایران کے ہر شہر میں جھگڑے فساد ہو رہے ہیں۔

وہاں زبردست مظاہرے ہورہے ہیں اور اس بار جتنے بڑے مظاہرے ہو رہے ہیں اس سے قبل کبھی نہیں ہوئے ہوں گے۔ اور امریکہ ان مظاہرین کے ساتھ ہے لیکن ایران کسی طور پر اپنے عوام کو یہ بات جاننے کا موقع نہیں دے گا امریکہ مظاہرینکی حمایت کرتا ہے۔

واضح ہو کہ ٹرمپ نے حلیفوں کے اعتراض کو نظر انداز کرتے ہوئے مئی میں امریکہ کو ایران اور عالمی طاقتوں پلس ون کے درمیان 2015میں ہوئے جوہری معاہدے سے الگ کر لیا تھا۔ اور ایران پر وہ پابندیاں پھر عائد کر دیں جو معاہدے پر دستخط کے بعد امریکہ نے ایران کے اوپر سے اٹھا لی تھیں۔لیکن ایران نے بھی اس کی پروا نہیں کی اور امریکی اقدام کے خلاف مزاحمت کرتا رہا اور ثابت قدم رہا ۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Trump says iran in turmoil since us withdrew from nuke deal in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News
Tags: , ,

Leave a Reply