اردنی لڑکے کے جنازے میں شامل ہزاروں افراد نے اسرائیل مخالف نعرے لگائے

اردن:اردن کے دارالحکومت عمان میں واقع اسرائیلی سفارت خانے میں گزشتہ دنوں ہونے والی فائرنگ میں مارے گئے اردن کے 16 سالہ لڑکے کے جنازہ میں شامل ہزاروں لوگوں نے اسرائیل کے خلاف نعرے بازی کرتے ہوئے سفارت خانہ بند کرنے کا مطالبہ کیا۔ اردن کی پولیس نے کل بتایا تھا کہ سفارت خانے کے سیکورٹی اہلکار کی فائرنگ میں ایک نوجوان لڑکے کی موت ہو گئی۔ اس کے جنازے میں شامل لوگ ”سرزمین اردن پر نہ سفیرہو نہ سفارت خانہ] اور اسرائیل مردہ باد کے نعرے لگارہے تھے۔
اردن پولیس نے کہا کہ ایک فرنیچر فرم میں کام کرنے والے سامان پہنچانے سفارت خانے گئے تھے جہاں اسرائیلی سیکورٹی گارڈ کے ساتھ ان کا تنازعہ ہو گیا اور سیکورٹی گارڈ نے فائرنگ کر دئی جس میں دو افراد ہلاک ہو گئے جن میں محمد جوادیش نام کا یہ 16سالہ لڑکا بھی شامل ہے۔ اسرائیل نے الزام لگایا کہ نوجوانوں نے اسکرو ڈرائیور سے گارڈ پر حملہ کیا اور گارڈ نے دفاع میں فائرنگ کی۔ انہوں نے نوجوانوں کی اس حرکت کو’دہشت گردانہ حملہ‘قرار دیا۔ واضح رہے کہ اردن اسرائیل کے ساتھ امن معاہدہ کرنے والا مصر کے بعد دوسرا مسلم ملک ہے۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Thousands of jordanians protest killing of teenager in embassy chant death to israel in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News

Leave a Reply