دیار غیر میں خدمات انجام دینے والے فوجیوں کو ہر ممکن قانونی تحفظ بہم پہنچایا جائے گا: تھریسا

برمنگھم:برطانیہ کی وزیر اعظم تھریسا مے نے کہا ہے کہ ملک سے باہر خدمات انجام دینے والے یہاں کے مسلح فوجیوں کی حفاظت کی جائے گی۔ حکمراں کنزرویٹو پارٹی نے بیرون ملک بالخصوص افغانستان اور عراق میں جنگ میں حصہ لے کر لوٹنے والے برطانوی فوجیوں کے خلاف جھوٹے قانونی دعوؤں پر تنقید کی ہے اور کہا کہ حکومت نے ان معاملات پر لاکھوں پونڈ خرچ کئے ہیں۔
محترمہ مے نے ایک بیان جاری کرکے کہا، “ہماری سیکورٹی فورسز دنیا میں بہترین ہیں اور ہماری حفاظت میں مردوخواتین نے بڑی قربانیاں دی ہیں۔” انہوں نے کہا کہ ہم ان کا شکریہ ادا کرتے ہیں اور گزشتہ لڑائیوں میں خدمات انجام دینے والوں کے خلاف جھوٹے الزام لگانے کے کھیل کو ختم کیا جائے گا۔ ..محترمہ تھریسا نے کہا کہ حال میں عراق اور افغانستان میں خدمات انجام دینے والے ان سلامتی دستوں کوقانونی تحفظ دیا جائے گا، جن کے خلاف جھوٹے الزام لگائے گئے ہیں۔
بیان میں کہا گیا ہے کہ عراق سے متعلق جانچ اور معاوضوں پر 2004 سے اب تک برطانیہ کی وزارت دفاع دس کروڑ پونڈ سے زیادہ خرچ کر چکی ہے۔ وزیر دفاع مائیکل فالون نے ایک بیان جاری کر کے کہا کہ ہمارے فوجیوں کے خلاف بڑے پیمانے پر بے بنیاد الزام لگانے کے لئے ہمارے قانونی نظام کا غلط استعمال کیا گیا ہے۔ یہ اپنی زندگی داؤ پر لگا کر ہماری حفاظت کرنے والوں کے لئے انتہائی افسوسناک ہے۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Theresa may vows to protect troops from legal witch hunt in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News

Leave a Reply