وسطی افغانستان میں طالبان کا ایک سرکاری عمارت پر حملہ،ڈسٹرکٹ گورنر اور انٹیلی جنس ڈائریکٹر سمیت 15ہلاک

کابل: طالبان وسطی افغانستان میںایک حکومتی ادارے میں گھس گئے اور کئی گھنٹے کے فائرنگ کے تبادلہ میں تین افسران بالا سمیت15کو ہلاک کر کے افغان فوجیوں کو نکال باہر کر دیا۔
کھوجہ عماری میں کیے جانے والا یہ زور دار حملہ غزنی صوبہ میں ،جس کے زیادہ تر علاقہ پر طالبان کا قبضہ ہے،باغیوں کا تازہ حملہ ہے۔طالبان نے کمپاؤنڈ کے اند ر محصور لوگوں کی مدد کے لیے باہر سے پہنچنے والی حکومتی سلامتی دستوں کی مدد کو روکنے کے لیے بارودی سرنگیں بچھا دی تھیں اور حملہ کے فوراً بعد ذمہ داری بھی قبول کر لی۔
طالبان کے ترجمان ذبیح اللہ مجاہد نے ایسوسی ایٹڈ پریس کو بتایا کہ کھوجا عماری میں حملہ کے بعد شہر کی تمام فوجی چوکیوں اب طالبان کے قبضہ میں ہیں۔
تاہم ڈسڑکٹ سینٹر ابھی حکومت کے ہی قبضہ میں ہے۔افغانستان کے ایک ممبر پارلیمنٹ محمد عارف رحمانی نے بتایاکہ جمعرات کے طالبان کے حملہ میں جو 15مارے گئے ہیں ان میں ڈسٹرکٹ گورنر، انتیلی جنس سروس ڈائریکٹر اور ایک ڈپٹی پولس افسر ہے۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Taliban storm government compound in central afghanistan killing 15 in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News

Leave a Reply