سرکاری سیز فائر کے نفاذ کے پہلے ہی روز طالبان کا غزنی میں منظم حملہ

کابل: افغان حکومت کی جانب سے سیز فائر پر عمل آوری کے اعلان کے پہلے ہی روز طالبان انتہاپسندوں نے جنوب مشرقی غزنی صوبہ کے موقر علاقہ پر حملہ کر دیا۔

صوبائی گورنرن کے ترجمان عارف نوری نے تصدیق کی کہ انتہاپسندں نے منگل کو علی الصباح موقو ر ضلع میں ایک منظم حملہ کیا۔اسی دوران ایک سیکورٹی اہلکار نے کہا کہ انتہاپسندوں نے دھماکہ خیز مواد سے بھری ہوموی بکتر بند گاڑی کو ڈسٹرکٹ سیکورٹی کمانڈمنٹ کمپاؤنڈ میں دھماکہ کر کے اڑا دیا۔

اس اہلکار نے مزید بتایا کہ مسلح تصادم میں کم از کم5پولس اہلکار ور دس سے زائد طالبان انتہاپسند ہلاک ہو گئے۔اہلکار کے مطابق یہ مسلح تصادم ابھی تک جاری ہے۔

یہ واقعات صد محمد اشرف غنی کے جمعرات کو کیے گئے اس اعلان کے بعد وقوع پذیر ہوئے ہیں جس میں انہوںنے کہا تھا کہ حکومت نے طالبان کے ساتھ سیز فائر کا فیصلہ کیا ہے جس کے تحت 27ویں روزے سے عید الفطر کے بعد پانچ روز تک جنگ بندی نافذ رہے گی۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Taliban launch coordinated attack on moqor district on first day of ceasefire in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News

Leave a Reply