شام دہشت پسندی کا ایکسپورٹر ہے: ترک صدر اردوغان

انقرہ: ترکی کے صدر رجبطیب اردوغان نے جنگ زدہ ملک شام دہشت گردی کا ایکسپورٹر ہے جس سے شام کے اندر اتھل پتھل سے اور زیادہ اضافہ ہوا ہے۔منگل کے روز استنبول میں ترکی صومالیہ بزنس فورم میں تقریر کرتے ہوئے اردوغان نے کہا کہ شام میں افرا تفری سے دولت اسلامیہ فی العراق و الشام (داعش) ، النصرہ، ڈیموکریٹک یونین پارٹی اور پیپلز پروٹیکشن یونٹس جیسی دہشت پسند تنظیموں کو ایسا ماحول مل جاتا ہے جس میں وہ خوب پھلتی پھولتی ہیں۔انہوں نے کہا کہ جہاں تک ترکی کا تعلق ہے تو ہم 30سال سے ایک علیحدگی پسند تنظیم سے نبرد آزما ہیں۔ہمارا نظریہ یہ ہے کہ دہشت گرد تنظیموں کے درمیان کوئی فرق نہیںہوتا۔ہم الشباب، داعش اور النصرہ میں کوئی تمیز نہیںکرتے اسی طرح کردستان ورکرز پارٹی ، ڈیموکریٹک یونین پارٹی اور شامی کرد پیپلز پروٹکشن یونٹس میں کوئی فرق نہیں کرتے۔پیپلز پروٹیکش یونٹس ڈیمو کریٹک یونین پارٹی کا مسلح بازو ہے اور ترکی اسے کالعدم کردستان ورکرز پارٹی کی شامی شاخ تصور کرتا ہے۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Syria is the exporter of terrorism says erdogan in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News

Leave a Reply