ملیشیا کے سابق وزیر اعظم محضیر بن محمد کے جلسہ میں تشدد، جوتے و کرسیاں اچھالی گئیں

کوالالمپور:ملیشیا کے نائب وزیر اعظم ڈاکٹر احمد زاید حمیدی نے کہا ہے کہ سابق وزیر اعظم محضیر بن محمد کے جلسہ میں تشدد برپا کرنے کے پس پشت جن افراد کا دماغ کارفرما ہے ان کے خلاف سخت کارروائی کی جائے گی۔نائب وزیر اعظم نے اس کے ساتھ ہی عوام سے بھی درخواست کی کہ وہ پولس کو اپنی تحقیقات مکمل کرنے دیں۔ انہوں نے کہا کہ سیاسی پارٹیوں میں نظریاتی اختلافات ہو سکتے ہیں لیکن کسی فرد یا ادارے کے خلاف جارحیت نہیں کی جانا چاہیے۔
اور ٹاؤن ہال مٰں جو کچھ ہوا اس کا انہیں بہت دکھ ہے۔ یہاں یہ بات قابل ذکر ہے کہ اپوزیشن پارٹی بیرساتو کی نوجوانوں کی شاخ کے صدر سید صادق سید عبدالرحمان کے مطابق اپوزیشن پارٹی کے صدر اور ملک کے92سالہ بزرگ سابق وزیر اعظم محضیر محمد جب ٹاؤن ہال میں تقریر کررہے تھے، اسی دوران ان پر کئی لوگوں نے جوتے، کرسیاں اور دیگر چیزیں پھینکیں۔ انہوں نے بتایا کہ مسٹر محضیرکو ٹاؤن ہال سے بحفاظتباہر نکال لیا گیا اور انہیں کوئی گزند نہیں پہنچی۔ مقامی میڈیا کے مطابق ٹاؤن ہال میں بعد میں پرتشدد تصادم میں کئی لوگ زخمی ہو گئے اور پولیس نے اس سلسلے میں دو افراد کو گرفتار کیا ہے۔
سید صادق نے پریس کانفرنس میں کہا، “ہم محسوس کرتے ہیں اور یقین رکھتے ہیں کہ میٹنگ کے دوران وہاں کچھ ایسے لوگ موجود تھے جو جلسہ درہم برہم اور مسٹر ماثرکو زخمی کرنا چاہتے تھے۔واضح ر ہے کہ مسٹر ماثروزیر اعظم نجیب رزاق کے خلاف مبینہ بدعنوانی کے ایک معاملے میں مہم چلا رہے ہیں۔ جبکہ مسٹر نجیب نے اگرچہ اس طرح کے الزامات سے صاف انکار کیا ہے۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Stern action to be taken against those behind violence at forum involving mahathir says malaysia in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News

Leave a Reply