جنوبی کوریا کی سابق صدر گیون ہائی کو بدعنوانی معاملہ میں24سال قید کی سزا

سیول: جنوبی کوریا کی ایک عدالت نے ملک کی سابق صدر پارک گیون ہائی کو ایک اس اسکینڈل میں جس سے سیاسی لیڈروں اور ملک کے کئی تجارتی اداروں (کمپنیوں) کے درمیان بدعنوانی کے جال کا پردہ چاک ہوا ہے 24سال قید کی سزا سنادی۔
پارک جنوبی کوریا کی جمہوری طور پر منتخب پہلی ایسی لیڈ تھیں جنہیں گذشتہ سال ایک آئینی عدالت نے ایک اسکینڈل کی پاداش میں،جس میں دو کمپنیوں کے سربراہوں کو قید کی سزا سنائی گئی تھی،عہدے سے برطرف کر دی گئی تھیں ۔عدالت نے پار ک پر ، جو کہ ایک سبق فوجی ڈکٹیٹر کی بیٹی ہیں،18بلین وون(16.9ملین ڈالر) کا جرمانہ بھی عائد کیا ہے۔
عدالت نے رولنگ دی کہ پارک نے سیمسنگ اور لوٹٹے سمیت کئی بڑی کمپنیوں سے اپنی دیرینہ دوست چوئی سون سیل کے کنبہ کی مدد کے لیے اور اپنی غیر منفعت بخش تنظیموں کے لیے 23.1بلین وون لیے تھے۔
استغاثہ نے 30سالہ کی قید اور 118.5بلین وون جرمانہ کی سزا کا مطالبہ کیا تھا۔66سالہ پارک نے،گذشتہ سال31مارچ سے جیل میں ہیں ،صحت جرم سے انکار کیا ہے۔

Title: south korean court jails former president park for 24 years for bribery | In Category: دنیا  ( world )

Leave a Reply