سنگاپور نے خطبہ جمعہ میں یہودی و عیسائی مخالف الفاظ استعمال کرنے پر ہندوستانی امام کو ملک بدر کر دیا

سنگاپور:سنگاپورمیں ایک ہندستانی امام کو یہودی اور عیسائیوں کے خلاف منفی تبصرے کی وجہ سے ملک چھوڑنے کے لئے کہا گیا ہے۔ تمل ناڈو سے تعلق رکھنے والے 47 سالہ نلا محمد عبدالجمیل عبدالمالک نے عدالت میں اقبال جرم کر لیا ۔ عدالت میں امام نے کہا کہ اس نے جو جملہ خطبہ میں پڑھا وہ قرآنی نہیں ہے۔وہ اس جملے کے معنی جانتا ہے اور اس کی تشریح یوں کی جاسکتی ہے کہ اس میں خدا سے دعا کی گئی ہے کہ مسلمانوں کو یہودیوں اور عیسائیوں پر فتح نصیب فرما۔ جس کے بعد سنگاپور حکومت نے اعلان کیا کہ امام کو یہودیوں اور عیسائیوں کے خلاف منفی تبصرہ کئے جانے کے معاملے میں ملک بدر کردیا جائے گا۔
جمیل پر چار ہزار سنگاپوری ڈالر کا بھی جرمانہ کیا گیا ہے۔ رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ گزشتہ جنوری میں سنگاپور کی چلیا مسجد میں جمعہ کی نماز کے بعد اپنے خطبہ میں کہا تھا ”یہودیوں اور عیسائیوں کے خلاف خدا مدد کرے“۔ سنگاپور کی وزارت داخلہ کی جانب سے کل جاری ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ ملک کے قانون کے مطابق ہم کسی بھی مذہب کے تیئں غفلت نہیں برت سکتے اور کسی مذہبی رہنما کی جانب سے کسی خاص مذہب یا اس سے وابستہ لوگوں کے تئیں منفی تبصرہ کئے جانے کی صورت میں سخت کارروائی کی جائے گی۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Singapore expels indian imam for divisive speech in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News

Leave a Reply