عالمی رہنماؤں نے استنبول حملے کی سخت مذمت کی

استنبول: یہاں کے اتارک انٹرنیشنل ہوائی اڈے پر ہونے والے خودکش حملے کی کم و بیش تمام عالمی رہنماؤں نے شید مذمت کی۔ وائٹ ہاؤس کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے ”ہم استنبول ہوائی اڈے پر حملے کی ’سخت الفاظ‘ میں مذمت کرتے ہیں۔ اور اس موقع پر امریکہ ترکی کے ساتھ مضبوطی کے ساتھ کھڑا ہے“۔
امریکہ میں ڈیموکریٹک پارٹی کی طرف سے صدر کے عہدے کی امیدوار ہلیری کلنٹن نے بھی ان حملوں کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ ”استنبول میں آج کا حملہ دنیا بھر میں بنیاد پرست دہشت گرد قوتوں کو شکست دینے کے ہمارے عزم کو مضبوط کرے گا“۔ انہوں نے کہا ”اس خطرے سے نمٹنے کے لئے ہمیں مشرق وسطی اور یورپ کے اپنے معاونوں کے ساتھ مل کر کام کرنا ہوگا“۔
ریپبلکن پارٹی کے صدارتی امیدوار ڈونالڈ ٹرمپ نے استنبول ہوائی اڈے پراس حملے کے بعد کہا کہ”پھر ایک اور دہشت گردانہ حملہ، اس بار ترکی میں۔ کیا دنیا کبھی اس کا تجزیہ نہیں کرے گی یہ کیا کچھ ہو رہا ہے“ یہ حملہ نہایت افسوسناک اور دردناک ہے۔ ”آج کے دور میں دہشت گردی جتنا بڑا خطرہ ہے اتنا پہلے کبھی نہیں رہا تھا“۔
انہوں نے کہا ”ہمارے دشمن اتنے ظالم ہیں کہ ان سے اختلاف رائے رکھنے والوں کو قتل کرنے میں انہیں ذرہ برابر بھی تذبذب نہیں ہوتا۔کم از کم ترکی کے ان دھماکوں سے ہی ہماری آنکھیں کھل جانا چاہئیں اور دہشت گردوں سے امریکہ کی حفاظت کے لئے ہمیں ٹھوس قدم اٹھانا چاہئے اور امریکہ کو محفوظ رکھنے کے لئے ہماری سلامتی کی صورتحال کو بہتر بنانے کوشش کرنی چاہیے۔
ہندوستان ، پاکستان ، انگلستان ،سعودی عرب، ایران فرانس اور جرمنی سمیت کئی ملکوں کے لیڈروں نے بھی اس ہولناک واردات کی سخت الفاظ میں مذمت کی۔

Title: several world leaders condemn terror attack on istanbuls airpport | In Category: دنیا  ( world )

Leave a Reply