ایرانی پارلیمنٹ اور خمینیؒ کے مزار پر و خود کش حملے، کئی ہلاک، کئی ممبران پارلیمنٹ کو یرغمال بنالیا ،داعش نے ذمہ داری لی

تہران: بندوق برداروں اور خود کش بمباروں نے ایران کی پارلیمنٹ اور بانی اسلامی انقلاب آیت اللہ روح اللہ علامہ خمینی کے مزار کو نشانہ بنا کر فائرنگ و دھماکے کیے جس میں متعدد افراد ہلاک ہو گئے۔ دولت اسلامیہ فی العراق و الشام (داعش) نے ان حملوں کی ذمہ داری قبول کی ہے۔موصول اطلاع کے مطابق چار بندوق بردار ، جو کلاشنکوف رائفلوں اور پستول سے لیس تھے، ایران کی پارلیمنٹ کمپلیکس میں گھسے ۔
ان میں سے ایک حملہ آور نے خود کو پارلیمنٹ کی چوتھی منزل پر دھماکہ سے اڑالیا۔غیر مصدقی خبروں کے مطابق داعش کے انتہا پسندوں نے کچھ ممبران پارلیمنٹ کو یرغمال بھی بنا لیا۔ابھی تک اس کا سراغ نہیں لگ سکا ہے کہ یہ دہشت گرد پارلیمنٹ کی عمارت میں کیسے گھسے جبکہ وہاں زبردست پہرہ ہوتا ہے۔اور سیکورٹی کے کئی مرحلوں سے گذر کر پارلیمنٹ کے احاطہ میں داخل ہوا جا سکتا ہے۔
پولس کے ہیلی کاپٹر پارلیمانی عمارت پر چکر کاٹ رہے ہیں، داخلے و نکاسی کے دروازے بند کر دیے گئے ہیں اور عمارت کے اندر سے موبائیل فون کے ذریعہ رابطہ منقطع کر دیا گیا۔ عینی شاہدین کا کہنا ہے کہ حملہ آوران پارلیمنٹ کی چوتھی منزل سے نیچے راہگیروں پر فائرنگ کر رہے ہیں۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Several dead in suicide attacks on iranian parliament and shrine in tehran in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News

Leave a Reply