ایران اور سعودی عرب میں مفاہمت کی اب کوئی گنجائش نہیں: شہزادہ محمد بن سلمان

ریاض: سعودی عرب کے نائب ولیعہد شہزادہ محمد بن سلمان نے دو ٹوک لہجہ میں یہ کہہ دیا ہے کہ ایران اور ان کے ملک کے درمیان کوئی مفاہمت نہیں ہو سکتی۔انہوں نے کہا کہ ایران عام اسلام پر اپنی اجارہ داری چاہتا ہے۔ایک تیلی ویژن انٹرویو میں شہزادہ محمد بن سلمان نے یہ بھی کہ سعوعدی عرب یمن میں ،جہاں سعودی عرب ایران کے حمایت یافتہ باغیوں کے خلاف حکومت کی وفادار فوج کی حمایت میں لڑ رہا ہے، ایک طویل جنگ برداشت کر سکتا ہے۔
شہزادہ محمد بن سلمان نے مزید کہا کہ سعودی عرب کسی ایسی حکومت کا کیسے ساتھ دے سکتا ہے جس کے انتہاپسندانہ خیالات و نظریات ہیں۔اور وہ شیعہ مسلک پھیلانے اور مسلم دنیا پر غلبہ پانے کی خواہش رکھتا ہو۔شہزادہ نے یہ بھی کہا کہ ایران کا بنیادی مقصد ہی مملکت سعودی عرب کو نقصان پہنچانا ہے۔شہزادہ محمد نے کہا کہ ایران سعودی عرب کے تئیں کبھی مخلص نہیں رہا اور مفاہت کے لیے اس کی تمام کوششیں مزاحیہ اور تمسخرانہ تھیں۔

Title: saudi prince rules out rapprochement with iran | In Category: دنیا  ( world )

Leave a Reply