یمن میں ہلاکتوں کی اقوام متحدہ کے ذریعہ تحقیقات کی حمایت کرنے والے ممالک کو سعودی عرب کی دھمکی

صنعا:سعودی عرب نے یمن میں جنگی خلاف ورزیوں کی بین الاقوامی تحقیقات کے لیے ایک کمیشن تشکیل دینے کے اقوام متحدہ کی قرار داد کی حمایت کرنے والے ملکوں کو دھمکی دی ہے کہ ان کا اقتصادی و سیاسی بائیکاٹ کیا جائے گا۔اقوام متحدہ میں انسانی حقوق کے سربراہ زید رعد الحسین یمن میں ہونے والے مظالم کے خلاف آزادانہ تحقیقات کے لیے کوشش کر رہے ہیں جسے سعودی عرب اب تک ناکام بناتا رہا ہے۔ اقوام متحدہ میں انسانی حقوق کونسل نے ایک ڈرافٹ تیار کیا ہے جسے کمیشن آف انکوائری کا نام دیا گیا ہے۔
اس میں مطالبہ کیا گیا ہے کہ اقوام متحدہ کے تحت یمن میں جنگی خلاف ورزیوں کی آزادانہ تحقیقات کروائی جائیں۔ جبکہ سعودی حکومت نے اعلان کیا ہے کہ اس ڈرافٹ کے حق میں ووٹ دینے والوں کے ساتھ ہمارے باہمی سیاسی اور معاشی روابط پر منفی اثرات مرتب ہونگے۔ہیومن رائٹس واچ کے ڈائریکٹر جان فشر نے کہا ہے کہ یہ دھمکیاں شرمناک ہیں۔ انہوں نے کہا کہ سعودی عرب کی جانب سے دوسرے ممالک کو بین الاقوامی تحقیقات کی حمایت پر دھمکیاں دینا، اشتعال انگیزی ہے۔
انہوں نے کہا کہ بات واضح ہے کہ سعودی عرب نے ہسپتالوں، بازاروں، گھروں اور جنازوں پر بمباری کی ہے ، اب وقت آ چکا ہے کہ بین الاقوامی برادری اِسے روکے اور کہے کہ بہت ہوچکا۔واضح رہے کہ سعودی عرب کی طرف سے یمن پر نافذ کردہ جنگ میں اب تک جاں بحق ہونے والوں کی تعداد دس ہزار کے قریب ہے اور پچاس ہزار لوگ زخمی ہیں۔ جبکہ زندہ بچ جانے والے دو کروڑ یمنیوں کو غذا اور ادویات کی قلت کا سامنا ہے۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Saudi arabia threatens countries that back un probe into yemen civilian deaths in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News

Leave a Reply