ملک میں نوٹ بندی اور بے روزگاری کے سبب موب لنچنگ میں اضافہ : راہل گاندھی

نئی دہلی: کا نگریس صدر راہل گاندھی نے جرمنی میں ہیمبرک کے بوسیریس سمر اسکول میں ایک تقریب میں مودی حکومت کی سخت الفاظ میں تنقید کرتے ہوئے اپنے خطاب  میں کہا کہ آزادی کے بعد کے70 سالوں میں ہندوستان نے جو بھی حاصل کیا تھا اسے موجودہ حکومت برباد کر رہی ہے۔

خطاب شروع کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ70 سال پہلے ہندوستان ذاتوں میں بٹا ہو ا تھا جس کی وجہ سے دلت اور پسماندہ ذاتوں کو کافی تعصب جھیلنا پڑتا تھا لیکن ہندوستان میں دھیرے دھیرے تبدیلی آئی اور اس تبدیلی کی وجہ ہندوستان کا آئین ہے جس میں ہر شخص کو ’ایک شخص ایک ووٹ ‘ کا حق دیا گیا۔

راہل گاندھی نے ہندوستان کی ان تبدیلیوں کا چین سے موازنہ کرتے ہوئے کہا کہ دونوں میں یہ عمل ایک ساتھ آیا لیکن ہندستان کا طریقہ الگ تھا۔ ہمارے یہاں چین کی طرح سب چیزوں کو ایک جگہ اور ایک کے ہاتھ میں نہیں رکھا گیا بلکہ اس کو تقسیم کیا گیا اور ساتھ میں وہاں جو تبدیلیاں آئیں اس میں تشدد کا عنصر شامل تھا جبکہ ہمارے ملک میں ایسا نہیں ہوا۔راہل گاندھی نے روزگار گارنٹی اسکیم، کھانے کے حق ، معلومات کے حق جیسی اپنی حکومت کی کامیاب اسکیموں کا ذکر کیا اور افسوس ظاہر کیا کہ موجودہ حکومت ان سب کو برباد کر رہی ہے۔

راہل نے کہا نوٹ بندی کی وجہ سے موب لنچنگ کے واقعات میں اضافہ ہوا ہے۔ انہوں نے کہا کہ نوٹ بندی کے سبب بے روزگاری بڑھی، جس کی وجہ سے تشدد کی سرگرمیوں خاص کرموب لنچنگ کوبڑھاوا ملا۔

انہوں نے بتایا کہ اب ہندوستان میں دلتوں، آدیواسیوں اور اقلیتوں کو حکومت سے کوئی فائدہ نہیں ملتا اور ان کے فائدہ کے لئے جو رقم ہے وہ بڑے کارپوریٹ گھرانوں کے پاس جا رہی ہے۔اس موقع پر راہل گاندھی نے مودی حکومت کے دو بڑے فیصلے نوٹ بندی اور جی ایس ٹی کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ ان فیصلوں کی وجہ سے ملک کی معیشت تباہ ہو گئی ہے اور بڑی تعداد میں گھریلوں صنعت میں کام کرنے والے مزدور اپنے گاؤں لوٹنے پر مجبور ہیں۔

عدم تشدد اور محبت میں اپنے یقین کو دہراتے ہوئے راہل گاندھی نے کہا کہ نفرت کا مقابلہ نفرت سے نہیں کیا جا سکتا۔راہل نے کہا کہ میں میرے والد کو دہشت گردوں نے مارڈالا اور جب کچھ سال بعد اس دہشت گرد کی موت ہوئی تو میں اس پر خوش نہیں ہوا کیونکہ میں خو د کو اس کے بچوں میں دیکھ رہا تھا۔

میں نے تشدد کو جھیلا ہے اور تشدد سے نپٹنے کا واحد راستہ معاف کرنا ہے۔ہندوستان میں خواتین کے تحفظ کے سوال پر انہوں نے کہا کہ جب تک خواتین کے تئیں مردوں کے نظریہ میں تبدیلی نہیں آئے گی جب تک یہ صورتحال بدلنے والی نہیں ہے۔ انہوں نے کہا جیسی صورتحال بتائی جاتی ہے ویسی ہے نہیں لیکن جب سماج میں تشدد بڑھتا ہے تو سماج کا کمزور طبقہ اس تشدد کا شکار ہو تا ہے۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Rahul gandhi blames joblessness demonetisation for lynchings in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News

Leave a Reply