ایرانی صحافی مرضیہ ہاشمی کی رہائی کے مطالبہ میں سوئس سفارت خانہ کے باہر ایرانیوں کا مظاہرہ

تہران: یہاں سوئزرلینڈ کے سفارت خانہ کے باہر ایرانیوں نے زبردست مظاہرہ کیا اور امریکہ کے دارالخلافہ واشنگٹن میں پریس ٹی وی کی خاتون صحافی و نیوز ریڈر مرضیہ ہاشمی کی گرفتاری کی مذمت کی۔ ایرانیوں نے سوئس سفارت خانہ کے باہر اس لیے مظاہرہ کیا کیونکہ ایران میں وہ امریکہ کی نمائندگی کر رہا ہے۔

مظاہرے کے دوران مظاہرین نے امریکی نژاد ایرانی صحافی کی، جو بغیر کسی جرم کے گذشتہ ایک ہفتہ سے جیل میں قید ہے، فوری رہائی کا مطالبہ کیا ۔یونیورسٹی طلبا، میڈیا اور سماجی کارکنان بھی ”رہا کرو بھائی رہاکرو،مرضیہ ہاشمی کورہا کرو“کے نعرے لگاتے ہوئے مظاہرے میں شریک تھے۔

دریں اثنا سوشل میڈیا میں ٹوئیٹر طوفان آگیا جس سے مرضیہ کی رہائی کے لیے دباو¿ اور بھی زیادہ ہو گیا۔مرضیہ کئی برسوں سے ایران میں اقامت پذیر تھیں۔لیکن 13جنوری کو امریکہ کی میسوری ریاست کے سینٹ لوئی میں انٹرنیشنل ایرپورٹ سے اٹھا لیا گیا تھا۔

کئی روز کی خاموشی کے بعد امریکہ کی ایک وفاقی عدالت نے جمعہ کے روز اس امر کی تصدیق کی کہ مرضیہ کوکچھ ایسے ثبوتوں کے وارنٹ پر گرفتار کیا گیا ہے جو مقدمہ چلائے جانے کے لیے کافی ہیں ۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Protest held outside swiss mission in tehran over us detention of press tv anchor in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News
What do you think? Write Your Comment

Leave a Reply

Your email address will not be published.