ملک کو دہشت گردی سے محفوظ رکھنے کے لیے نئی امیگریشن پالیسی وضع کی گئی ہے: ٹرمپ

واشنگٹن: امریکہ کے صدر ڈونالڈ ٹرمپ نے اپنی متنازعہ امیگریشن پالیسیوں کا دفاع کرتے ہوئے کہا ہے کہ ملک کو دہشت گردی کے خطرے سے محفوظ بنانے کے لئے سخت امیگریشن قانون بنائے گئے ہیں۔ مسٹر ٹرمپ نے کل امریکی کانگریس کے مشترکہ اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ سخت امیگریشن قانون بنانے اور سرحدوں کو محفوظ بنانے کا اثر امریکی لوگوں پر پڑے گا اور ان کی پوزیشن اور بہتر ہوگی۔ انہوں نے کہا کہ ان پالیسیوں میں تبدیلی کرنے سے امریکہ میں روزگار کے مواقع بڑھیں گے اور لوگوں کو بہتر تنخواہ ملے گی۔ انہوں نے کہا کہ کئی ممالک میں قابلیت کی بنیاد پر امیگریشن کو منظوری دینے کا بندوبست ہے۔ ایسا ہونا بھی چاہئے۔
کوئی بھی ایسا شخص جو کسی اور ملک میں داخل ہونے جا رہا ہے اور وہاں کام کر کے اپنی روزی روٹی کمانے والا ہے، اس کی قابلیت کی جانچ کے بعد اسے داخل ہونے کی اجازت دینا غلط نہیں ہے۔ مسٹر ٹرمپ نے کہا کہہم سسٹم پر مبنی امیگریشن نظام تیار کریں گے۔ امیگریشن قانون کو لاگو کرنے پر امریکی عوام کی تنخواہ میں اضافہ ہو گا، بے روزگاروں کو روزگار ملے گا، اربوں ڈالر کی بچت ہوگی اور ہمارا ملک زیادہ محفوظ بن سکے گا۔امریکہ کے صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے کانگریس کے مشترکہ اجلاس سے اپنے پہلے خطاب میں کہا کہ ملک میں یہودی برادری کے مراکز پر حملوں کی دھمکیوں اور یہودی قبرستان میں توڑ پھوڑ کے بعد سامنے آنے والے ردعمل سے یہ ظاہر ہوتا ہے کہ امریکہ منافرت پر مبنی ہر طرح کے اقدامات کی مذمت کرتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہم ایک نئے امریکی عزم کو دیکھ رہے ہیں ”ہمارے اتحادی دیکھیں گے کہ امریکہ ایک مرتبہ پھر قیادت کے لیے تیارہے۔“
صدر ٹرمپ نے کہا کہ انھوں نے امریکیوں کی بات سنی اور امیگریشن قوانین کا نفاذ شروع کیا۔ انہوں نے اپنے اس خطاب میں ایک مرتبہ پھر میکسیکو سے اپنی سرحد پر دیوار بنانے کے عزم کو دہرایا اور کہا کہ یہ جرائم اور منشیات کے خلاف موثر اقدام ہو گا۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: President donald trump defends immigration policy in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News

Leave a Reply