فلسطینی رہنما محمود عباس نے اپنے یہود مخالف بیان پر معافی مانگ لی

یروشلم: فلسطینی رہنما محمود عباس نے اپنے اس بیان پر معافی مانگ لی جس میں انہوںنے کہا تھا کہ یورپی یہودیوں کا تاریخی قتل عام اور ان پر ظلم و ستم ان کے مذہب کے باعث نہیں بلکہ ان کے سلوک و برتاو¿ کے باعث ہوا تھا۔ ان کے اس بیان کے بعد محمود عباس پر یہ کہتے ہوئے سخت تنقید کی جا رہی تھی کہ ان کا یہ بیان ان کی یہود دشمنی کا مظہر ہے۔ فلسطینی نیشنل کونسل کے چارروزہ اجلاس کے اختتام پر رملہ میں عباس کے دفتر سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ عباس یہود دشمنی کی مذمت کرتے ہیں اور یہودیوں کے قتل عام کو تاریخ کا نہایت گھناو¿نا اور بہیمانہ جرم قرار دیتے ہیں۔ انہوں نے بیان میں کہا کہ اس اجلاس میں دیے گئے ان کے اس بیان سے لوگوں کو خاص طور پر یہودی عقیدے کے ماننے والوں کو تکلیف پہنچی ہے تو وہ اس کے لیے ان سب سے معافی کے خواستگار ہیں۔انہوں نے مزیدکہا کہ اس قسم کا بیان دے کر ان کا مقصد کسی کی دل آزاری کرنا نہیں تھا اور وہ یہودیت کے تئیں اپنے پورے احترام کا اعادہ کرتے ہیں۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Palestinian leader abbas offers apology for remarks on jews in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News

Leave a Reply