لندن میں پریس کانفرنس کے دوران وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کی کھنچائی

لندن: ان رپورٹوں کے درمیان کہ پاکستان میں پریس سنسر شپ بڑھ رہی ہے لندن میں ایک کنیڈیائی صحافی نے وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کو یہ کہتے ہوئے آڑے ہاتھوں لیا کہ حکومت کی شکایت پر اس کا سوشل میڈیا اکاؤنٹ بند کر دیا گیا۔

یہ معاملہ اس وقت اٹھا جب جیل میں قید سابق صدر آصف علی زرداری کا ایک انٹرویو ٹیلی کاسٹ کرنے کی پاداش میں پاکستان الیکٹرانک میڈیا ریگولیٹری اتھارٹی (پیم را) کے ذریعہ تین نجی ٹی وی چینلوں پر پابندی لگائے جانے کے کچھ روز بعد قریشی جمعرات کو لندن میں”تحفظ آزادی ابلاغی ذرائع“ پر ایک پریس کانفرنس سے خطاب کر رہے تھے۔

یہ کارروائی اس لیے ہوئی کیونکہ حکومت پاکستان نے فیصلہ کیا ہے کہ پاکستان کے سابق وزیر اعظم میاں محمد نواز شریف اور سابق صدر مملکت آصف علی زرداری جیسے سزا یافتہ اور جیل میںقید سیاستدانوں کو ٹی وی کوریج نہ ملے۔

اسی پریس کانفرنس کے دوران کنیڈا کے ایک دائیں بازو کی سیاسی ویب سائٹ ربیل میڈیا(Rebel media)سے وابستہ خاتون صحافی عذرا لیوانت نے مداخلت کرتے ہوئے وزیر قریشی پر زبانی حملہ کیا کہ ان کی حکومت پاکستان کی شکایت پر ان کا ٹوئیٹر اکاؤنٹ بند کر دیاگیا۔

انہون نے کہا کہ مٰں جو کچھ کہہ رہی ہوں بالکل درست ہے۔ٹوئیٹر نے میرا مکمل طور پر اکاؤنٹ بند نہیں کیا ہے بلکہ ان کے کچھ ٹوئیٹ یہ عذر پیش کرتے ہوئے حذف کردیے گئے کہ اس سے پاکستان کے قوانین کی خلاف ورزی ہوتی ہے۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Pakistan foreign minister shah mehmood qureshi heckled in london over press censorship in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News
What do you think? Write Your Comment

Leave a Reply

Your email address will not be published.