وائٹ ہاؤس کو خاک کے ڈھیر میں بدل دیا جائے گا:شمالی کوریا کی دھمکی

پیونگ یانگ:شمالی کوریا کے صدر کم جونگ کی ہٹ دھرمی اور تسلسل کے ساتھ ایٹمی دھماکوں اور میزائل تجربات پر امریکہ ،جنوبی کوریا اور جاپان کے شدید ردعمل اور دھمکیوں نے اب نہایت سنگین رخ اختیار کر لیا ہے اور صورت حال اس قدر دھماکہ خیز ہو چکی ہے کہ چنگاری دکھانے کی ضرورت ہے اور پوری دنیا تیسری عالمی جنگ کی لپیٹ میں آسکتی ہے۔امریکہ اور شمالی کوریا کے تعلقات تاریخ کی بدترین سطح پر پہنچ چکے ہیں، تعلقات میں کشیدگی بہت تیزی کے ساتھ بڑھتی ہی جا رہی ہے اور نوبت یہاں تک پہنچ گئی ہے کہ دونوں ممالک اب ایک دوسرے کو صفحہ ہستی سے مٹانے کے درپے ہیں۔
شمالی کوریا نے امریکہ کو انتہائی خطرناک دھمکی دیتے ہوئے کہا ہے کہ اگر امریکہ نے شمالی کوریا پر حملہ کیا تو ہم وائٹ ہاوس کو خاک میں ملا دیں گے۔رپورٹ کے مطابق شمالی کوریا میں ایک مضمون شائع ہوا ہے جس کو ایک جنگی ماہر نے لکھا ہے جس میں کہا گیا ہے کہ اگر امریکہ اور شمالی کوریا کے درمیان جنگ ہوئی تو یقینا اس جنگ کا فاتح شمالی کوریا ہو گا اور اور ہم امریکہ کے ماضی کے تمام جرائم کا حساب چکتا کر دیں گے۔واضح رہے کہ امریکہ نے شمالی کوریا کے ہمسائے میں لاکھوں فوجیوں کے ساتھ جنگی مشقیں شروع کر رکھی ہیں جبکہ چین بھی اپنی فوج کو بارڈر پر لے آیا ہے۔

Title: north korea declares the white house will be ashes warning | In Category: دنیا  ( world )

Leave a Reply