پاکستان نے مسئلہ کشمیر حل کرنے کے لیے ایک خصوصی سفیر مقرر کرنے کا جنرل اسمبلی میںمطالبہ کیا

اقوام متحدہ: (یو این آئی)پاکستان نے اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے اجلاس میں کشمیر کا مسئلہ اٹھاتے ہوئے سلامتی کونسل سے کشمیر معاملے کے لئے ایک خصوصی سفیر مقرر کرنے کا مطالبہ کیا ہے اور اس کا پرامن طریقے سے جلد حل نکالے جانے کی اپیل بھی کی ہے۔ اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے اجلاس کے 72 ویں سیشن کو کل خطاب کرتے ہوئے پاکستان کے وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی نے ہندوستان پر کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزی کرنے کا الزام لگایا اور اس کی بین الاقوامی سطح کی جانچ کرانے کا مطالبہ کیا۔ مسٹر عباسی، جنہوں نے پہلی بار وزیر اعظم پاکستان کے طور پر جنرل اسمبلی کے اجلاس میں حصہ لیا، کشمیر کے مسئلے کو حل کرنے کے لئے عالمی برادری سے درخواست کی۔
عباسی نے عالمی برادری سے اپیل کی کہ اس معاملے پر ہندوستان کے او پر دباؤ ڈالیں۔ انہوں نے سلامتی کونسل سے مطالبہ کیا کہ کشمیر کے مسئلے کے حل کے لئے اپنی تجویز پر عملدرآمد کرے۔ پاکستانی وزیر اعظم نے کہا کہ اس مسئلے کو حل کرنے کے لئے اقوام متحدہ کے سکریٹری جنرل اور انسانی حقوق کمیشن کے کمشنر کو تحقیقات کرنی چاہئے تاکہ مجرموں کے خلاف سخت کارروائی کی جا سکے۔ مسٹر عباسی نے موسمیاتی تبدیلی کا مسئلہ اٹھاتے ہوئے عالمی رہنماؤں سے پیرس موسمیاتی معاہدے کی حمایت کرنے کی اپیل کی۔ انہوں نے چین کی ’ون بیلٹ ون روڈ‘ کی پالیسی کی بھی حمایت کی اور اسے ترقی کے لئے لازمی قرار دیا۔ انوہں نے یہ بھی کہا کہ پاکستان میں طالبان کی کوئی محفوظ پناہ گاہ نہیں ہے۔انہوں نے یہ بھی کہ پاکستان افغانستان کی جنگ میں قربانی کا بکرا نہیں بن سکتا۔نہ ہی وہ ایسی کسی ناکام حکمت عملی کی تائید کر سکتا جس سے خطے کے عوام کے مصائب اور پریشانیاں مزید بڑھ جائیں۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: No taliban safe havens in pakistan pm shahid khaqan abbasi at un in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News

Leave a Reply