ملٹری بیس پرطالبان کے حملے اور افغان فوج کی جوابی کارروائی میں40 فوجیوں سمیت120 ہلاک

کابل: افغانستان کے صوبہ قندھار میں ایک افغان فوجی چھاونی پر دہشت گرد تنظیم طالبان کے دہشت گردوں کے حملہ میں40فوجی اہلکار ہلاک اور پندرہ زخمی ہو گئے ہیں۔
افغان وزارت دفاع کا کہنا ہے کہ طالبان فوجی اڈے پر کنٹرول حاصل کرنا چاہتے تھے لیکن افغان فوجیوں نے زبردست جوابی کارروائی کر کے جہاں فوجی اڈے کو طالبان کے قبضہ مین جانے سے بچا لیا وہیں 80سے زائد طالبان دہشت گردوں کو موت کے گھاٹ بھی ارتار دیا۔ افغان وزارت دفاع کے ترجمان دولت وزیری نے 80طالبان کی ہلاکت کی خبر دیتے ہوئے یہ بھی بتایا کہ چھاونی میں موجود 21 فوجی لا پتہ ہیں اور سات فوجیوں کو طالبان نے اغوا کر لیاہے
۔ عینی شاہدین کا کہنا ہے کہ سینکڑوں مسلح افراد نے فوجی بیس پر قبضہ حاصل کرنے کے لئے چاروں طرف سے گھیر کر حملہ کیا ہے۔واضح رہے کہ گزشتہ چند ماہ کے دوران طالبان کی جانب سے افغان فوج کے خلاف یہ سب سے بڑی دہشت گردانہ کارروائی ہے جبکہ دو روز قبل کابل میں ہونے والے خودکش حملے میں چھتیس افراد ہلاک اور چالیس سے زائد زخمی ہو گئے تھے۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Nearly 40 afghan soldiers lost lives 30 wounded in kandahar attack in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News

Leave a Reply