امر یکی سفارت خانہ آئندہ سال تل ابیب سے یروشلم منتقل کر دیا جائے گا

تل ابیب:امریکی نائب صدر مائیک پینس نے اسرائیل کی پارلیمنٹ میں تقریر کرتے ہوئے اعلان کیا کہ ا امریکیسفارتخانہ آئندہ سال تل ابیب سے یروشلم منتقل کر دیا جائے گا ۔انھوں نے اسی کے ساتھ اسرائیل کے تحفظ کو امریکا کی ذمہ داری قرار دیا اور کہا کہ امریکا اسرائیل کے تحفظ میں کوئی دقیقہ فرو گذاشت نہیںکیے رکھے گا۔
امریکا کے نائب صدر نے کہا کہ امن معاہدے کو اسرائیل کے تحفظ کا ضامن ہونا چاہئے۔ امریکا کے نائب صدر نے اسی کے ساتھ فلسطینی رہنماؤں سے کہا کہ اسرائیل کے ساتھ امن مذاکرات شروع کریں۔ مائیک پینس نے صیہونی حکومت کی پارلیمنٹ میں اپنی تقریر کے دوران ایسی حالت میں فلسطینی رہنماؤں سے امن مذاکرات شروع کرنے کا مطالبہ کیا ہے کہ فلسطینی انتظامیہ نے اعلان کیا ہے کہ مائک پینس سے کوئی بھی فلسطینی رہنما ملاقات نہیں کرے گا۔ اسی کے ساتھ بعض اراکین پارلیمنٹ نے مائیک پینس کے خلاف نعرے لگائے اور ان کے قریب جانے کی کوشش کی لیکن سیکورٹی اہلکاروں نے انہیں گرفتار کر لیا۔
اس کے علاوہ مزاحمتی فلسطینی تنظیموں کی اپیل پر غزہ، غرب اردن اور بیت المقدس میں پیر کو بھی فلسطینی عوام نے مظاہرے کر کے امریکی نائب صدر کے دورے کی مذمت کی۔ فلسطینی مظاہرین نے امریکی نائب صدر کے خلاف نعرے بازی کے ساتھ ساتھ ہی صدر ٹرمپ کے پتلے اور امریکی پرچم بھی نذرآتش کیا۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Mike pence says u s embassy will open in jerusalem next year in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News

Leave a Reply