امریکی عدالت نے مسلم ملکوں کے شہریوں کی امریکہ آمد پر پابندی کے ٹرمپ حکم پر عمل آوری روک دی

ہونو لولو: امریکہ کی ایک وفاقی عدالت نے صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے حال ہی میں آٹھ ممالک کے شہریوں کے امریکہ آنے پر پابندی لگانےکے حکم پر عمل آوری پر منگل کے روزحکم امتناعی جاری کر دیا۔ مسٹر ٹرمپ کی سفری پابندی کی ہدایت پرآج سے ہی عمل درآمد کیا جانا تھا۔ لیکن ایک وفاقی جج ڈیرک واٹسن نے اس ہدایت پر عارضی طورپر روک لگا دی گئی ہے۔
اس نئی سفری پابندی میں ایران، لیبیا، شام، یمن ،صومالیہ، چاڈ اور شمالی کو ریا کے شہری شامل تھے۔ اس کے علاوہ وینزوئیلا کے چند اہلکار وں پر بھی پابندی لگائی گئی تھی۔
یاد رہے کہ اس سے قبل ٹرمپ انتظامیہ نے جو پابندی لگانے کی کوشش کی تھی اس میں چھ مسلم اکثریتی ممالک کو شامل کیا گیا تھا تاہم اسے ملک کی عدالتِ عظمیٰ نے روک دیا تھا۔ خیال رہے کہ ہوائی صوبہ نے ہونولولو میں ٹرمپ کی اس سفری پابندی کے خلاف معاملہ درج کرایا تھا ۔
وائٹ ہائس کی ترجمان سارہ ہکا بی سانڈرس نے اس عدالتی فیصلہ میں سقم بتایا اور کہا کہ اس سے امریکی عوام کے نتحفظ کے لیے ڈونالڈ ٹرمپ کی کوششوں کو دھچکا پہنچا ہے۔امریکہ کی وزارت قانون نے کاہ ہے کہ وہ ا س فیصلہ کے خلاف فوری طور پر اپیل کرے گی۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Judge halts newest trump travel ban saying it has same woes in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News
Tags: ,

Leave a Reply