انڈونیشیائی پولس نے توہین رسالت معاملہ میں عیسائی گورنر کے خلاف تحقیقات شروع کردی

جکارتہ:انڈونیشیا کی پولس نے توہین رسالت کے الزام میں چینی نژاد جکارتہ کے عیسائی گورنر کو مشتبہ ملزم قرار دے کر ان کے خلاف تحقیقات شروع کردی ہیں۔
انڈونیشیا کے جرائم کی تفتیش کے محکمے کے سربراہ آری ڈونو سیماتو نے بتایا کہ جکارتہ کے گورنر بسوکی جاہاجا پروناما عرف اشوک کو تحقیقات کے دوران ملک نہیں چھوڑنا چاہئے۔ انہوں نے کہا کہ”اس معاملے میں اگرچہ کوئی بیان نہیں لیا گیا ہے لیکن زیادہ تر لوگوں کی رائے ہے کہ معاملے کا تصفیہ عدالت میں ہونا چاہئے ۔
شدت پسند مسلمانوں کی تنظیموں نے مبینہ طور پر قرآن کی توہین کئے جانے پر جکارتہ کے گورنرکے استعفی کا مطالبہ کیا ہے۔ اطلاع کے مطابق مسلم گروپوں کی شکایت پر پولس نے توہین رسالت کے مقدمہ میں ملزم جکارتہ کے گورنر کے خلاف تفتیش شروع کرنے کا فیصلہ کیا ہے اور ان کے ملک چھوڑ نے پر پابندی عائد کردی گئی ہے۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Jakarta governor ahok suspect in blasphemy case indonesian police in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News

Leave a Reply