شام میں سرگرم داعش کو اسرائیل کی خصوصی سرپرستی حاصل ہے: ایک رپورٹ

دمشق: یوں تو اسرائیل دنیا کے مختلف ممالک میں دہشت گرد گروہوں کی مدد کر ہی رہا ہے لیکن شام میں بشار الاسد حکومت کے خلاف بر سرپیکار دہشت گرد تنظیم دولت اسلامیہ فی العراق و الشام ( داعش) سمیت دیگر دہشت پسندگروہوں کو تو اس کی خاص طور پر سرپرستی حاصل ہے۔ اور یہ صیہونی حکومت ان دہشت گردوں کی دامے درمے سخنے مدد بھی کھل کر کر رہی ہے۔ رواں سال کے دوران اسرائیل نے شام میں دہشت گردوں کو32 ملین ڈالر بطور امداد دیے ہیں۔ بین الاقوامی خبر رساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق اسرائیل کی وزارت صحت، وزارت خزانہ اور سیکیورٹی ادارے شام میں موجود دہشت گردوں کے علاج معالجے اور اسلحے کی فراہمی سمیت دیگر ضروریات کے لئے بھرپور امداد دے رہے ہیں۔اس سے قبل اسرائیلی فوج نے اس بات کا اعتراف کیا تھا کہ اسرائیلی ہسپتالوں میں داعشی عناصر کا مفت علاج کیا جاتا ہے جبکہ اب تک چودہ سو سے زائد دہشت گردوں کا اسرائیل میں علاج کیا گیا ہے۔ اسرائیل سمیت بعض دیگر ممالک شام و عراق سمیت دیگر ممالک میں موجود دہشت گرد گروہوں کو بھرپور مالی اور عسکری مدد فراہم کرتے ہیں۔واضح رہے کہ دہشت گرد تنظیم داعش کو اگر اسرائیل اور امریکہ سمیت بعض عرب ممالک کی سرپرستی حاصل نہ ہوتی تو وہ کبھی بھی شام اور عراق میں اتنا بڑا بحران پیدا نہیں کر سکتے تھے اور یہ سب ان ممالک کی سرپرستی سے ہی ممکن ہوا ہے اور اب بھی جاری ہے۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Israel masterminding weapons supplies to terrorists in syria in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News

Leave a Reply