افغانستان میں امریکی موجودگی کے باوجود داعش پنپ رہی ہے:حامد کرزئی

کابل:افغانستان کے سابق صدر حامد کرزئی نے کہا ہے کہ پہلے روس افغانستان میں دہشت گردی سے مقابلے کے لیے امریکہ کی حمایت کر رہا تھا لیکن صورتحال یہ ہے کہ امریکہ کی موجودگی کے باوجود داعش پھیلتی ہی جا رہی ہے جس کی وجہ سے روسی خاصے پریشان ہیں۔ان کا مزید کہنا تھا کہ ہم بھی اس مسئلے کی وجہ سے پریشان ہیں اس لیے میں نے اپنے دور حکومت میں امریکہ کے ساتھ سیکیورٹی معاہدہ نہیں کیا تھا۔ حامد کرزئی نے اس حوالے سے روس کی پریشانی کو درست قرار دیتے ہوئے کہا کہ امریکہ کو چاہیے کہ وہ روس کو اس حوالے سے جواب دے۔انہوں نے مزید کہا کہ یہ بات سوچنے والی ہے کہ کس طرح امریکہ کے افغانستان میں ہونے کے باوجود داعش اپنے قدم جمانے میں کامیاب ہوئی؟افغانستان کے سابق صدر نے امریکہ کی طرف سے افغانستان میں اپنی فوج میں اضافے کے اعلان کی شدید مخالفت کی اور کہا کہ افغانستان میں فوج کے بڑھانے سے جنگ اور ویرانی میں اضافہ ہو گا۔
کرزئی نے پاکستان پر الزام لگاتے ہوئے کہا کہ اسلام آباد دہشت گردی کو اپنی خارجہ پالیسی کے طور پر استعمال کرتا ہے۔ حامد کرزئی نے کہا کہ اسلام آباد کی یہ پالیسی خود پاکستان اور خطے کے ممالک کے لیے مشکلات کا باعث بنے گی۔ملک بھر میں جاری دہشت گردی کے خاتمے کے لئے حکومت اور پاک فوج کی جانب سے کارروائیاں جاری ہیں۔ دہشت گردوں کے ناپاک وجود سے پاکستان کو صاف کرنے کے لئے آپریشن رد الفساد بھی جاری ہے۔ سیکیورٹی اداروں کی جانب سے دہشت گردوں کو گرفتار کرنے کے بعد کیفردار تک پہنچانے سے ہی دہشت گردی کا خاتمے ممکن ہے لیکن اگر سابقہ پالیسی کو جاری رکھتے ہوئے گرفتار دہشت گردوں کو مختلف بہانوں سے رہا کیا جائے تو دہشت گردوں کی حوصلہ شکنی کی بجائے حوصلہ افزائی ہوگی۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Isis getting strong in afghanistan in spite of us presence in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News
Tags: , ,

Leave a Reply