عراق میں کرد مظاہرین پر فائرنگ5ہلاک

سلیمانیہ: عراقی کردستان میں اس وقت پانچ افراد ہلاک ہو گئے جب سلامتی دستوں نے آزادی کے لیے آزادی کے استصواب رائے پر عمل آوری نہ کرنے پر احتجاج میں کیے جانے والے مظاہرے کے دوران فائرنگ کر دی۔ شمالی عراق کے خود مختار کرد علاقہ میں مظاہرین نے ایک مئیر اور سیاسی پارٹیوںکے دفاتر نذر آتش کر دیے۔
واضح رہے کہ ستمبر میں ہونے والے ریفرنڈم میں آزادی کے حق میںووٹ پڑے تھے لیکن حکومت عراق نے بڑے پیمانے پر انتقامی کارروائی شروع کر کے پہلے ہی اقتصادی طور پر بدحال کردستان کو مزید کاری ضرب لگائی۔جس پر کردوں نے مظاہرہ کیا اور ا تشدد پر آمادہ ان مظاہرین کو منتشرکرنے کے لیے سلامتی دستوں نے فائرنگ کر دی جس میں5ہلاک اور کم از کم70زخمی ہو گئے۔

Title: iraqi kurdistan protests turn deadly | In Category: دنیا  ( world )

Leave a Reply