ایران نے شامی باغیوں پربمباری کے لیے روس کو فضائی اڈے استعمال کرنے کی اجازت دے دی

ماسکو: ایرانی صدر حسن روحانی نے جو آج کل روس کے دورے پر ہیں، کہا ہے کہ اب روس شام میں باغیوں اور دولت اسلامیہ فی العراق و الشام (داعش) کے دہشت گردوں کی سرکوبی کے لیے ایرانی فضائی اڈوں کو استعمال کر سکتا ہے۔ ایران کے وزیر خارجہ نے ایک بیان میں کہا ہے کہ روس ایران کے فوجی ائیر بیس استعمال کر سکے گا۔
شام میں دہشت گردوں کے خلاف جاری لڑائی میں ایران اور روس ایک موقف پر ہیں۔ پہلے بھی ایک مرتبہ روسی جنگی جہازوں نے شام میں دہشت گرد گروہ داعش کے ٹھکانوں پر حملہ کرنے کے لیے ایرانی فوجی ائیر بیس کا استعمال کیا تھا۔غیر ملکی ذرائع ابلاغ سے گفتگو کرتے ہوئے ایرانی وزیر خارجہ نے کہا ہے کہ شام میں انتہا پسند اور دہشت گرد گروہوں کے خلاف کارروائی کی خاطر ہم نے اجازت دی ہے کہ روسی جنگی طیارے ایرانی فوجی فضائی اڈے استعمال کر سکتے ہیں۔
ان کا کہنا تھا کہ روس کا ایران میں کوئی فوجی اڈا نہیں ہے۔ تاہم ہمارے فوجی اڈے بوقت ضرورت استعمال کیے جاسکیں گے۔ جواد ظریف نے مزید کہا: دہشت گردی کے خلاف جنگ میں ہمارے درمیان اچھا تعاون پایا جاتا ہے۔واضح رہے کہ صدر ایران کے ہمراہ ایرانی وزیر خارجہ جواد ظریف بھی دورہ روس پر جانے والے سرکاری وفد میں شامل ہیں۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Iran says russia can use its military bases on case by case basis in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News

Leave a Reply