ابراہیم بیکورا امریکی شہر پیٹرسن کے پولس سربراہ مقرر،قرآن ہاتھوں میں لے کر حلف لیا

نیو یارک: امریکہ کی ریاست نیو جرسی کے پیٹرسن شہر میں پہلی بار کسی مسلمان کو پولس سربراہ مقرر کیا گیا ہے۔

پیٹرسن کے کئیر نے کہا کہ امریکہ کی تاریخ میں یہ پہلا موقع ہے کہ کسی ترک شہری کا پولس سربراہ کے عہدے پر تقرر ہوا ہے۔

ابراہیم مائیک بیکورا کی ماہ رواں کے اوائل میں پیٹرسن شہر کے 17پولس سربراہ کے طور پرحلف برداری سٹی ہال کی ایک سادہ مگر پر وقار تقریب میں ہوئی۔

انہوں نے جب حلف لیا تو ان کے ہاتھ میں قرآن پاک کا ایک نسخہ تھا۔ ابراہیم گذشتہ 30برس سے پیٹرسن شہر کے محکمہ پولس میں خدمات انجام دے رہے ہیں۔

ان کی تقریب حلف برداری کا آغاز قومی ترانے اور دعاءسے ہوا جس میں نیو یارک اور نیو جرسی میں اقامت پذیر ترک ،پیٹرسن کی بلدیاتی حکومت کے اعلیٰ عہدیداران اور ابراہیم کے اہل خاندان اور رشتہ دار وں نے شرکت کی۔

ابراہیم بیکورا کا تقرر13 فروری کو ہی ریٹائر ہونے والے تروئی اوسوالڈ کی جگہ ہوا ہے۔

تقریب حلف برداری سے خطاب کرتے ہوئے پیٹرسن کے مئیر آندرے سائغ نے کہا کہ ابراہیم بیکورا امریکہ کی تاریخ میں پہلے ترک پولس سربراہ ہوں گے۔اور پیٹرسن شہر کی تاریخ میں پہلی بار کسی مسلمان کا پولس سربراہ کے عہدے پر تقرر کیا گیا ہے۔

ابرہیم بیکورا نے حاضرین محفل سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ وہ پیٹرسن کے مشرقی علاقہ میں پل کر جوان ہوئے اور وہیں اسکولی تعلیم حاصل کی نیز میری نصف صدی کی زندگی کا زیادہ تر حصہ پیٹرسن میں ہی گذرا۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Ibrahim baycora appointed us city police chief swears in with hand on quran in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News
What do you think? Write Your Comment

Leave a Reply

Your email address will not be published.