ہلیری کلنٹن نے چیلنجوں سے نمٹنے کے لیے متحد ہونے کی ضرورت پر زور دیا

واشنگٹن: ہلیری کلنٹن نے ڈیموکریٹک پارٹی کی طرف سے صدارتی امیدوار کی نامزدگی قبول کرتے ہوئے امریکی قوم کو درپیش چیلنجز سے نمٹنے کے لیے متحد ہونے کی ضرورت پر زور دیا ہے۔ جمعرات کو رات دیر گئے پینسلوینیا کے شہر فلاڈیلفیا میں اپنی پارٹی کے قومی کنونشن کے اختتام پر اپنے خطاب میں ہلیری کلنٹن کا کہنا تھا کہ ’یہ ہم پر منحصر ہے۔
ہمیں یہ فیصلہ کرنا ہوگا کہ ہم مل کر کام کریں گے تاکہ ہم دوبارہ اکٹھے آگے بڑھ سکیں‘۔ واضح رہے کہ 68 سالہ ہلیری کلنٹن کسی بھی بڑی پارٹی کی جانب سے منصب صدارت کے لیے نامزدگی حاصل کرنے والی پہلی امریکی خاتون ہیں۔ انھوں نے سینیٹر برنی سینڈرز کو پرائمری اور کاکس کے ہونے والے انتخاب میں شکست دے کر یہ نامزدگی حاصل کی۔
مسٹر سینڈرز بھی اس کنونشن میں اپنی تقریر کے دوران ان کی حمایت کر چکے ہیں لیکن ان کے بعض حامی گروپوں نے ہلیری کلنٹن کی حمایت نہ کرنے کا اعلان بھی کیا ہے جو کہ خاتون امیدوار کے لیے نومبر میں ہونے والے انتخاب میں ایک چیلنج ہو سکتا ہے۔
ہلیری کلنٹن نے جمعرات کو اپنی تقریر میں سینڈر کی طرف سے ان کی حمایت کو سراہتے ہوئے نوجوانوں کو ووٹ ڈالنے، اقتصادی ترقی اور سماجی انصاف پر آواز بلند کرنے کو اجاگر کیا۔ انھوں نے کہا کہ ’میں آپ کو بتایا چاہتی ہوں کہ میں نے آپ کو سنا ہے، آپ کا مقصد ہمارا مقصد ہے‘۔ نومبر میں ہونے والے صدارتی انتخاب میں ان کا مقابلہ ریپبلکن امیدوار ڈونلڈ ٹرمپ سے ہوگا۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Hillary clinton accepts nomination in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News

Leave a Reply