افغان صدر اشرف غنی نے بس مسافروں کے قتل کی سخت مذمت کی

کابل:صدر افغانستان محمد اشرف غنی نے منگل کی صبح طالبان انتہا پسندوں کے ہاتھوں 17بس مسافروں کے قتل کی مذمت کی۔واضح رہے کہ صدر غنی نے واردات کے30گھنٹے بعد اس بہیمانہ واردات کی مذمت کی ہے۔
پیر اورمنگل کی درمیانی شب دو بجے طالبان انتہا پسندوں نے چنگیوں پر بسوں، کاروں اور کئی گاڑیوںکو روک کر ان کے تمام مسافروں کو جن کی مجموعی تعداد185تھی اغوا کر لیا تھا ۔ اس میں سے انہوں نے 17کو الگ کر کے باقیوں کو جانے کی اجازت دے دی۔ اور اس کے بعد ان 17اغوا شدگان کو افغان سلامتی اداروں میں ملازمت کرنے کاملزم کہہ کر ایک قطار میں کھڑا کر کے گولیوں سے بھون ڈالا۔صدر غنی نے بے قصور افراد کو ہلاک کرنے کو دھوکہ فریب کا عمل قرار دیا۔
انہوں نے کہا کہ یہ بد کردار لوگ ایسے جرائم کر رہے ہیں جن کی اسلام ہر گز اجازت نہیں دیتا۔ انہوں نے کہا کہ معصوم افغان باشندوں کوہلاک کرنے کے غیر ملیوں کے ہدف کو پورا کرنے کے لیے طالبان غیر ملکی دہشت گردوںکے ساتھ مل کر اپنے ہی ہموطنوں کو تہ تیغ کر رہے ہیں۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: ghani condemns execution of passengers vows severe punishment for perpetrators in Urdu | In Category: دنیا  ( world ) Urdu News

Leave a Reply