مرجع کے کہنے پر ہی عراق میں دہشت گردوں کے خلاف کارروائی کی جائے گی:جنرل سلیمانی

تہران: سپاہ پاسداران انقلاب اسلامی قدس فوج کے کمانڈر میجر جنرل قاسم سلیمانی نے کہا ہے کہ عراق میں دہشت گردوگروپوں کے خلاف ایران اسی صورت میں کارروائی کرے گا جب عراق کے مرجع اسے ضروری محسوس کرے گی۔
میجر جنرل کا یہ بیان سعودی عرب کے وزیر خارجہ عاد ل الجبیرکے اس بیان کے بعد آیا ہے جس میں انہوں نے دعویٰ کیا تھا کہ ایران کچھ علاقائی ممالک کے بشمول عراق داخلی معاملات میں مداخلت کر رہا ہے ۔ میجر جنرل نے مزید کہا کہ جب تک شیعہ عالم آیت اللہ عظمیٰ سید علی السیستانی عراق میں موجود ہیں اسلامی جمہوریہ ایران عراق میں مداخلت کی ضرورت محسوس نہیں کرتا۔
ہاں البتہ جیسے ہی عراقی مرجع یہ کہے گی کہ سیاسی و بین الاقوامی صورت حال اس امر کی متقاضی ہے کہ کارروائی کی جائے تو ضرور کی جائےگی۔بعد ازں ایرانی وزارت خارجہ کے ترجمان حسین جبیری انصاری نے الجبیر کے اس دعوے کو خارج کر دیا کہ اسلامی جمہوریہ ایرانکی حکومت عراق کی درخواست پر کوئی مشاورتی کمیٹی عراق میں موجود ہے۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: General soleimani no need for irans military presence in iraq in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News

Leave a Reply