بنگلہ دیش کی سابق وزیر اعظم خالدہ ضیاءکو پانچ سال کی سزائے قید

ڈھاکہ: بنگلہ دیش کی سپریم کورٹ نے سابق وزیر اعظم خالدہ ضیاءکو بدعنوانی اور غبن کے معاملات میں پانچ تا دس سال سزا سنا دی۔عدالت نے ان کے بیٹے طارق رحمٰن کوبھی پانچ سال قیدکی سزا سنادی۔وہ اس وقت لندن میں رہائش پذیر ہے۔
جن دیگر کو سزا سنائی گئی ہے ان میں بنگلا دیش نیشنل پارٹی کے ممبر پارلیمنٹ قاضی سلیمان الحق کمال ، وزیر اعظم کے سابق پرنسپل سکریٹری کمال الدین صدیقی اور ایک تاجر سمیت دو دیگر شامل ہیں۔
اس سے قبل خالدہ ضیاءنے ان لزامات کی تردیدکی تھی۔ انسداد بدعنوانی کمیشن نے دس سال پہلے ایک کرپشن کیس دائر کیا تھا۔ جس میں ا سنے خالدہ ضیاءاور پانچ دیگر کو دو کروڑ ایک لاکھ ٹکا کے غبن کا ملزم ٹہرایا تھا۔
یہ رقم یتیموں کے لیے ایک غیر ملکی بینک سے منتقل کی گئی تھی۔واضح رہے کہ ضیاءاور بنگلہ دیش نیشنل پارٹی رہنماؤں کے خلاف فنڈ کے غلط استعمال کے حوالے سے کئی معاملات سمیت30سے زائد معاملات ہیں۔

Title: former bangladesh pm khaleda zia sentenced to five years in prison | In Category: دنیا  ( world )

Leave a Reply