سعودی ناکہ بندی سے یمن غذائی بحران کے ساتھ ساتھ دواؤں کی بھی شدید قلت کا شکار

ثناء:سعودی عرب اور اتحادی ممالک کے محاصرے کی وجہ سے یمن میں انسانی بحران شدت اختیار کرتا جا رہا ہے۔ ملک بھر میں غذائی قلت کے ساتھ ساتھ دواؤں کی قلت سے بیماروں کے علاج معالجے میں شدید مشکلات درپیش ہیں اور اس بات کا خدشہ ظاہر کیا جا رہا ہے کہ یہی صورت حال باقی رہی تو آئندہ قلیل مدت میں ہزاروں یمنی شہریوں کی موت واقع ہو سکتی ہے۔عرب ذرائع کے مطابق یمنی وزارت صحت کے ترجمان عبدالحکیم الکحلانی کا کہنا ہے کہ سعودی عرب اور اس کے اتحادیوں کی جانب سے یمن کے جاری محاصرے اور دواؤں کی قلّت کی وجہ سے تقریبا دس ہزار بیمار یمنی شہریوں کی جانوں کو شدید خطرہ ہے۔
ان کا کہنا ہے کہ ہر سال ہزاروں بیماروں کو علاج معالجے کی غرض سے بیرون ملک لے جایا جاتا ہے جبکہ سعودی عرب اور اس کے اتحادیوں کی جانب سے یمن کے جاری محاصرے کی وجہ سے ان بیماروں کو علاج کے لئے بیرون ملک جانے میں رکاوٹیں درپیش ہیں۔صنعا کے ایک بڑے ہسپتال کے انچارج کا کہنا ہے کہ یمن کے جاری محاصرے اور علاج کے لئے بیرون ملک نہ جا پانے اور ملک میں دواوں کی قلت کی وجہ سے مختلف بیماریوں میں مبتلا ہزاروں بچوں کی موت واقع ہو رہی ہے۔واضح رہے کہ سعودی عرب اور اس کے اتحادیوں نے دو سال سے یمن کا مکمل محاصرہ کیا ہوا ہے جبکہ یمنی شہریوں پر فضائی اور زمینی حملے بھی کئے جا رہے ہیں۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Food and medicine crisis worsen in yemen due to saudi led blockade in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News

Leave a Reply