سعودی عرب نے غیر مقیم بیرونی شہریوںپر رہائشی ٹیکس لگادیا

ریاض:سعودی عرب نے گناہ ٹیکس لگانے کے بعد سعودیائی زیشن 2020کے تحت ہر شعبہ حیات میں صرف سعودی بے روزگاروں کو روزگار بہم پہنچانے اورعالمی سطح پر تیل کی گرتی ہوئی قیمت اور داخلی طور پر بگڑتی ہوئی معاشی صورت حال پر قابو پانے کے لئے غیر ملکی تارکین وطن سے وصولی شروع کر دی ہے۔ اس ضمن میں اس نےغیر ملکی شہریوں پر سو ریال ماہانہ ٹیکس عائد کر دیا ہے جس کا نفاذ یکم جولائی سے کر دیا گیا۔ اس سے قبل سعودی حکومت تمباکو سے بننے والی اشیا پر ملک گیر پیمانے پر گناہ ٹیکس عائد کر چکا ہے جس کی وجہ سے سگریٹ، سافٹ ڈرنک اور کولڈ ڈرنک سمیت دیگر اشیا کی قیمتوں میں حد سے زیادہ اضافہ ہو گیا ہے۔
سعودی حکومت نے سعودیزیشن پلان 2020 کے تحت ہر غیر ملکی شہری پر سو ریال ماہانہ ٹیکس عائد کر دیا ہے جس میں سالانہ سو ریال کا مزید اضافہ ہوتا جائے گا۔ یکم جولائی2018 سے ہر غیر ملکی شہری کو دو سو ریال ماہانہ ٹیکس ادا کرنا ہوں گے جو کہ سال بھر میں چوبیس سو ریال بنتے ہیں۔ اسی طرح 2020 تک اس ٹیکس میں سالانہ سو ریال کا اضافہ ہوتا جائے گا۔واضح رہے کہ سعودی عرب میں غیر ملکی شہریوں پر عائد کیا جانے والا یہ ٹیکس وزار محنت نے لگایاہے تاکہغیر ملکی ملازمین کو نکال کر ان کی جگہ سعودی ملازمین کو بھرتی کیا جاسکے۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Family tax of 100 riyals levied on expats in saudi arabia in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News

Leave a Reply