ترکی میں ایک پولس گاڑی پر بم حملہ،11ہلاک36ر زخمی

استنبول:ترکی کے سب سے بڑاشہر استنبول اس وقت دہل اٹھا جب ایک بس اسٹاپ کے قریب زبردست دھماکہ ہوا جس میںکم از کم11افراد ہلاک اور36دیگر زخمی ہو گئے۔
نیوز چینل ہیبر ترک کے مطابق یہ دھماکہ اس وقت ہوا جب وسطی استنبول کے ویزنے سیلر میں ایک تھانہ کے قریب منگل کے روز ایک خود کش کار بمبار نے دھماکہ خیز مواد سے بھری اپنی کار کوایک پولس بس سے ٹکرا دیا۔
دھماکہ کے فوراً بعد فضا بندوق کی گولیوں کی تڑتڑاہٹ سے گونج اٹھی۔ جائے دھماکہ سے سے قریب واقع دکانوں کو بھی کافی نقصان پہنچا ۔ استنبول کے گورنر واصف شاہین نے کہا کہ ہلاک شدگان میں سات پولس افسران بھی شامل ہیں ۔
انہوں نے یہ بھی کہا کہ36افراد زخمی ہوئے ہیں۔ پولس نے احتیاطی تدابیر کے طور پر قریبی عمارتیں خالی کرالیں۔دھماکے کے بعد ایمبولنسوں کو جائے وقوعہ کی جانب دوڑتے دیکھا گیا۔یہ دھماکہ شہر کے اس تاریخی علاقہ میں صبح بھیڑ بھاڑ کے وقت ہوا جو سیاحوں کی توجہ کا مرکزہے۔
فوری طور پر اس دھماکے کی کسی نے ذمہ داری نہیں لی ہے۔لیکن حال ہی میں کرد انتہاپسندوں، دولت اسلامیہ فی العراق و الشام(داعش) اور بائیں بازو کی انقلابی طاقتوں نے اس نوعیت کے کئی حملے کیے ہیں اس لیے شک کی سوئی انہی کی جانب گھومتی ہے۔

Title: explosion targets police bus in central istanbul 11 killed 36 wounded | In Category: دنیا  ( world )

Leave a Reply