سابق یو این او سربراہ بان کیمون جنوبی کوریا کے صدر بننے کی دوڑ میں شامل ہو سکتے ہیں

سیول: اقوام متحدہ کے سابق سکریٹری جنرل بان کی مون جنوبی کوریا میں ہوئے ریفرنڈم میں دوسرے سب سے زیادہ مقبول لیڈر بن کر ابھرے ہیں۔ جس کے بعد یہ قیاس آرائیاں زور شور سے شروع ہو گئیںکہ بان کمیون ملک کے صدر بننے کی دوڑ میں شامل ہو سکتے ہیں۔ جنوبی کوریا کے ایک اخبار کی طرف سے کئے گئے ریفرنڈم میں صدر کے عہدے کے لیے مسٹر مون 22.2 فیصد لوگوں کی پسند کے ساتھ دوسرے نمبر پر ہیں۔
اس دوڑ میں لبرل پارٹی کے سابق اپوزیشن پارٹی کے رہنما مون جا۔ ان 26.1 فیصد ووٹوں کے ساتھ سب سے آگے ہیں۔ سروے میں گزشتہ ہفتے مسٹر مون کو 21.5 فیصد ووٹ ملے تھے تو وہیں مسٹر جا۔ ان کو 26.8 ووٹ ملا تھا۔ گزشتہ ایک ہفتے میں مون کی مقبولیت میں جہاں تقریباً 0.7 فیصد اضافے ہوا ہے، وہیں مسٹر جا۔
ان کی مقبولیت میں کمی آئی ہے۔اس ریفرنڈم میں ڈھائی ہزار لوگوں نے حصہ لیا تھا۔ واضح رہے کہ ملک کی صدر پارک گوئن ہے کے خلاف پارلیمنٹ میں گزشتہ ماہ تحریک مواخذہ پیش کی گئی ہے۔ اگر یہ منظور ہوجاتی ہے تو ملک میں دو ماہ کے اندر الیکشن ہونگے۔ بصورت دیگر اس سال کے اواخر میں 20 دسمبر کو صدارتی انتخاب ہو گا۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Ex un chief ban narrows gap in opinion poll for south korean presidency in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News

Leave a Reply