یوروپی یونین و امریکی سفارت کاروں کا ایران ایٹمی معاہدے پرتبادلہ خیال

واشنگٹن: امریکی وزیر خارجہ ریکس ٹلرسن کے ساتھ اپنی پہلی ملاقات میں یوروپی یونین کی خارجہ پالیسی کے سربراہ فیڈریکا موگیرینی نے، جو آجکل دورہ امریکہ پر ہیں، دہشت گردی۔روس۔ ایران ایٹمی معاہدے اور یوکرین کے بارے میں تفصیل کے ساتھ بات کی۔ انہوں نے بتایا کہ انہیں مسٹر ٹلرسن سے ملاقات کرکے خوشی ہوئی ہے۔ انہوں نے کئی موضوعات پر کھل کر بات کی۔
دونوں نے بین اٹلانٹک تعلقات دہشت گردی سے نمٹنے روس کے ساتھ تعلقات ، ایران ایٹمی معاہدے اور یوکرین سے لے کر شام تک کی لڑائیوں پر تبادلہ خیال کیا محکمہ خارجہ نے بات چیت کی تفصیل نہیں بتائی۔ دیگر سفارتکاروں کے ساتھ موگیرینی نے بھی 2015 میں ایران کے ساتھ معاہدہ کرانے میں اہم رول ادا کیا تھا۔اس معاہدے سے ایران کے ایٹمی پروگرام پر لگام لگائی گئی ہے اور اس کے عوض ایران کے خلاف عائد پابندیوں میں کچھ نرمی کی گئی ہے۔
مگر ٹرمپ اس معاہدے کے خلاف ہیں۔ انہوں نے پچھلے ہفتہ ایران کے بیلسٹک میزائل کے تجربہ پر اسے خبردار بھی کیا تھا جس سے دونوں ملکوں کے درمیان کشیدگی بڑھنے کا امکان پیدا ہوگیا ۔ ٹرمپ نے روس کے ساتھ مل کر کام کرنے کاخیال ظاہر کیا ہے جس سے یوروپی اتحادی خفا ہیں اور ریپبلکن اور ڈیموکریٹ ممبران نے بھی نکتہ چینی کی ہے ان کا کہنا ہے کہ روس امریکہ اور دیگر مغربی جمہوریاو¿ں کا دشمن ہے۔

Title: eu top diplomat discusses russia iran nuclear deal with tillerson | In Category: دنیا  ( world )

Leave a Reply