ترک صدر اردوغان کو زبردست جھٹکا،استنبول کے مئیر کے لیے دوبارہ انتخاب کرانے پر بھی حزب اختلاف کا امیدواجیتا

استنبول: ترک صدر رجب طیب اردوغان کو اس ووقت سخت ہزیمت کا سامنا کرنا پڑا جب استنبول کے مئیر کے لیے دوبارہ الیکشن کرانے کے بعد بھی حزب اختلاف ریپبلکن پیپلز پارٹی (سی ایچ پی) کا ہی امیدوار فاتح قرار دیا گیا۔

سی ایچ پی امیدوار اکرم امام اوغلو نے مارچ میں اردوغان کے پسندیدہ امیدوار بن علی یلدرم کو13000ووٹوں سے ہرا دیا تھا لیکن یلدمر نے اس نتیجہ کو چیلنج کر دیا جس پر نئے الیکشن کا حکم جاری کر دیا گیا۔

فتح سے ،حروم کیے جانے کے بعد اکرم نے جمہوریت کے لیے آخری دم تک لڑنے کا اعلان کر دیا جس نے ان کا نام زباں زد عام کر دیا۔اور ہر سو انہی کا چرچا رہا یہاں تک کہ جب دوباریہ ووٹنگ ہوئی تو امام اوغلو 7لاکھ75ہزار ووٹ سے جیت گئے۔

اپنی فتح کے بعد امام اوغلو نے کہا کہ ”عزت ماٰب صدر میں آپ کے ساتھ ہم آہنگی سے کام کرنے تیار ہوں۔ میں آپ سے درخواست کرتا ہوں کہ مجھے جتنی جلد ممکن ہو سکے ملاقات کا وقت دیں۔

تنقید نگاروں کا کہنا ہے کہ اردوغان ترکی کے اقتصادی قلعہ استنبول کو ہاتھ سے نہیں نکلنے دینا چاہتے۔لیکن اس بار ترک رہنما نے شکست تسلیم کر لی اور ٹوئیٹ کیا” میں اکرم امام اوغلو کو ان کی کامیابی کی مبارکباد دیتا ہوں “۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Erdogan dealt major blow as party loses re run of istanbul mayor election in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News
What do you think? Write Your Comment

Leave a Reply

Your email address will not be published.