سکھ فیڈریشن یو کے کو اسمتھ ویک سے باہر پھینک دیا گیا۔ایک سچائی

برمنگھم:یکم مئی 2016بروز اتوار جی این سی اسمیتھ وک میں ایک بڑے مجمع نے جس میں پوری قیادت اور ساو¿تھمپٹن ،گریو سینڈ، سلوغ ، لسسٹر،ولسال اور لیمنگٹن وغیرہ سمیت پورے یوکے میں موجود سکھ فیڈریشن یو کے کے متعدد حامیوں نے دیکھا کہ ایک نئی کمیٹی کے قیام کے عمل کے دوران سکھ فیڈریشن یوکے کو انتظامیہ کمیٹی سے بے دخل کردیا گیا اور اس کے کلیدی اور نہایت اہم اراکین کو اسٹیج پر بیٹھنے کی اجازت نہیں دی گئی ۔
جی این سی اسمتھ وک کے سنگت اراکین نے بتایا کہ کمیٹی کے سلیکشن کے دوران یہ دھکا مکی اور دھاندلیاں و گڑ بڑ اس قد رسنگین اور تشویشناک ہو گئیں کہ مہاراج جی کے سکھ آسن کو مزید بے ادبی سے بچانے کے اقدامات کرنے پر مجبور ہونا پڑا۔ سکھ فیڈریشن یو کے کے حامیوں پر مشتمل کبڈی کلب کے اراکین نے صدر ملکیت تینگ کی حمایت کرتے ہوئے گور سکھوں کو دھکے دے کر اسٹیج سے اتارنے اور دیوان کو زبردستی بھگانے کی کارروائی سے اس عمل کو شروع سے ہی زبردست نقصان پہنچا۔جسے سنگت نے ناپسند کیا۔
اس کے بعد مختلف گروپوں کی نوجوان نسل نے سلیکشن کو کامیاب بنانے کے لیے اسٹیج اورانتخابی عمل کو اپنے ہاتھ میں لے لیا۔اس عمل میں آئین میں مرقوم ان مختلف ہدایات کا اورجنہیں ” جو طاقتور ہوگا وہی کمیٹی کا فیصلہ کرتا ہے ‘ ‘ کے مماثل بتایا جاتا ہے، استعمال کیا گیا۔ اور یہ وہ عمل تھا جوتین سال قبل پہلی بار دیکھنے میں آیا تھا۔
اس کا نتیجہ یہ نکلا کہ نوجوان گورسکھوں کو اہم منصوبوں مثلاً صدر، جنرل سٍکریٹری اٍور اسٹیج سکریٹری و دیگر اہم عہدوں سے سرفراز کر کے اب تک کی سب سے کم عمر لڑکوں پر مشتمل کمیٹی کا قیام عمل میں لایا گیا۔اس عمل کا خیرمقدم کیا جانا چاہئے اور اب کئی امیدیں وابستہ ہو گئی ہیں کہ پنتھ مخالف سکھ فیڈریشن کی برطرفی اور نئی نسل اور نوجوانوں پر مشتمل کمیٹی کا قیام گوردواروں اور سنگت کے حق میں مفید و سود مند ثابت ہوگا۔
سنگت کو ایک یہ سوال کرنا چاہئے کہ آخر سکھ فیڈریشن یو کے کو ایسی کیا ضرورت محسوس ہوئی کہ پورے ملک کا دورہ کیا جائے اور ایک مقامی گوردوارے کے انتخاب میں مداخلت کی جائے۔انہیں اس بات کا بھی جواب دینا چاہئے کہ سکھ نیٹ ورک کے باس( جوسکھ فیڈریشن یو کے کا ایک حصہ ہیں) جس کھٹکرکے خلاف جنہیں کبڈی کلب کے کھلاڑیوںکے ساتھ مل کر ویڈیو میں بڑی بے دردی سے لوگوں کو دھکے دے کر اسٹیج سے اتارتے دکھایا گیا ہے،کیا کارروائی کی جائے گی۔تاہم آپ ایک سوال کا جواب مانگنے کے لیے پریشان نہ ہوںکیونکہ تاحیات صدر امریک سنگھ گل سے لے کر نیچے تک سکھ فیڈریشن یو کے کی پوری قیادت کو سلیکشن کے عمل پر حاوی ہونے کی کوشش کرتے دیکھا گیا ۔ ان میں سے کوئی بھی سمتھویک سنگت کے مستقل ا اراکین نہیں ہیں۔ہمارے گوردواروں میں اس قسم کی رکیک اور قابل مذمت حرکتوں کی گنجائش نہیں ہے۔اور جو ایسی حرکتوں کے ذمہ دار ہیں وہ در اصل سری گورو گرنتھ صاحب جی کے بے ادبی و بے حرمتی کرر ہے ہیں اور یہ پنتھک مخالف رویہ ہے جسے ہرگز بردشت نہیں کیا جائے گا۔

Title: entire leadertship of sikh federation uk thrown out of smethwick gurudwara | In Category: دنیا  ( world )

Leave a Reply