آخری صدارتی مذاکرہ میں ہلیری اور ٹرمپ کی ایک دوسرے پر طعنہ زنی

لاس ویگاس: امریکہ میں ڈیموکریٹک پارٹی کی صدارتی امیدوار ہلیری کلنٹن اور ریپبلکن پارٹی کے صدارتی امیدوار ڈونالڈ ٹرمپ کے درمیان روس کے صدر ولادیمیر پتن کے معاملے پر تیکھی بحث ہوئی۔ آٹھ نومبر کو ہونے والے انتخابات سے قبل تیسری اور آخری صدارتی مذاکرہ میں مسٹر پتن کے معاملہ پر دونوں لیڈروں نے ایک دوسرے کو نشانہ بنایا۔
محترمہ کلنٹن نے ٹرمپ کو مسٹر پتن کو کٹھ پتلی قرار دیا تو وہیں ٹرمپ نے الزام لگایا کہ محترمہ کلنٹن پتن سے چڑھتی ہیں کیونکہ پتن نے انہیں ہر معاملے میں پیچھے چھوڑ دیا ہے۔ محترمہ کلنٹن نے کہا کہ حال ہی میں ملک میں ہوئے سائبر حملوں کے معاملے پر ٹرمپ نے روس اور مسٹر پتن کی تنقید نہیں کی۔ امریکی خفیہ ایجنسیوں اور ہوم لینڈ سیکورٹی محکمہ نے گزشتہ دنوں ڈیموکریٹک پارٹی کی قومی کمیٹی سے منسلک ای میل کو لیک کرنے اور سائبر حملوں کے لئے روس کو ذمہ دار ٹھہرایا تھا۔
انہوں نے کہا “ٹرمپ کو ملک کے فوجی اور سویلین خفیہ حکام سے زیادہ مسٹر پتن پر اعتماد ہے۔ مسٹرٹرمپ نے پتن کا قریبی ہونے کا الزام مسترد کرتے ہوئے کہا کہ روس کے ساتھ بہتر تعلقات بنانے کے معاملے میں وہ محترمہ کلنٹن کے مقابلہ میں زیادہ اہل ثابت ہوں گے۔انہوں نے کہا کہ مسٹر پتن محترمہ کلنٹن کا احترام نہیں کرتے، وہ ہمارے موجودہ صدر کا کوئی احترام نہیں کرتے ہیں اور میں آپ کو بتا دوں کہ اس سے ہمارے لئے بہت سنگین مصیبت پیداہو سکتی ہے۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Donald trump and hillary clinton spar in final debate in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News

Leave a Reply