افغانستان میں امریکہ طالبان کے خلاف جنگ ہار رہا ہے: امریکی وزیر دفاع کا اعتراف

واشنگٹن:افغانستان میں جنگ کے 16سال بعد امریکہ کے وزیر دفاع جیمز میٹس کا کہنا ہے کہ امریکہ کو افغانستان میں طالبان کے خلاف جنگ میں شکست کا سامنا ہے۔ امریکہ، افغانستان میں طالبان کے خلاف جنگ ہار رہا ہے۔خبر رساں ادارے کے مطابق امریکہ کے وزیر دفاع جیمز میٹس کا سینیٹ کی آرمڈ سروسز کمیٹی کو اجلاس کے دوران کہنا تھا کہ امریکہ افغانستان میں طالبان کے خلاف جنگ جیت نہیں رہا بلکہ امریکہ جنگ میں شکست سے دوچار ہے۔ اور ہمیں جتنا جلد ممکن ہو سکے اس جنگ کو اپنے حق میں کرنا ہوگا۔چونکہ افغانستان میں دور دور تک حالات امریکہ کے حق میں سازگار نہیں ہیں اس لیے طالبان سے جنگ کیلئے ایک نئی حکمت عملی تیار کی جارہی ہے۔
جو جولائی کے وسط تک وضع کر لی جائے گی۔ جس میں افغانستان میں مزید فوجی دستے بھیجنے پر غور کیا جارہا ہے جبکہ ارکان پارلیمان کو جولائی میں اس حکمت عملی سے آگاہ کردیا جائے گا۔اجلاس میں سینیٹ کے بعض ارکان نے جیمز میٹس سے سوال کیا کہ افغانستان میں 2001 سے جاری جنگ میں تقریباً 2300 امریکی فوجی ہلاک اور 17 ہزار فوجی زخمی ہوئے ہیں۔ اس قدر قربانیاں دینے کے باوجود امریکہ افغانستان میں حالات بہتر بنانے میں کیوں ناکام رہا ہے۔ سینیٹ کے ارکان کی جانب سے مزید کہا گیا کہ فورسز کا افغانستان میں 58 فیصد علاقے پر کنٹرول ہے جبکہ طالبان نے اس سال مزید 11 فیصد علاقہ اپنے زیر قبضہ کرلیا ہے۔ جبکہ جیمز میٹس کی طرف سے کسی بھی سوال کا جواب نہیں دیا گیا۔ البتہ اتنا کہا کہ کانگریس کو وسط جولائی تک کئی نئی حکمت عملی تیار کر لینی چاہیے۔سنیٹر جان میک کین نے افغانستان میں جنگ کے حوالے سے نئی حکمت عملی وضع نہ کرنے پر ڈونالڈ ٹرمپ ایڈ منسٹریشن کو زبردست لتاڑا۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Defense secretary james mattis admits us not winning in afghanistan in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News

Leave a Reply