ایرانی پارلیمنٹ اور حرم مطہر امام خمینیؒ پر حملے میں ہلاک شدگان کی تعداد 13 تک پہنچی

لندن: ایران کے دارالحکومت تہران میں خودکش حملہ آور اور مسلح افراد کی جانب سے بدھ کو پارلیمنٹ اور اسلامی انقلاب کے بانی آیت اللہ امام خمینی کی آرام گاہ پر حملے میں مرنے والے کی تعداد بڑھ کر 13 ہو گئی ہے جبکہ اس حملے میں 43 افراد زخمی ہو گئے۔ ایران کی سرکاری میڈیاآئی آر آئی بی نے نائب وزیر داخلہ محمد حسین ذوالفغیری کے حوالے سے یہ اطلاع دی۔ واضح رہے کہ دہشت گرد تنظیم دولت اسلامیہ فی العراق و الشام (داعش) نے اس حملے کی ذمہ داری لی ہے۔ اس نے اس ضمن میں ایک ویڈیو جاری کیا ہے جس میں دکھایا گیا ہے کہ ایک مسلح شخص پارلیمنٹ کے اندر موجود ہے اور وہاں پاس ہی ایک شخص زخمی حالت میں پڑا ہے۔
ویڈیو میں ایک آواز بلند ہورہی ہے جو عربی زبان میں ہے ۔ ایران کے نائب وزیرداخلہ محمد حسین ذوالفغیری نے ایرانی سرکاری ٹی وی کو بتایا کہ مرد حملہ آوروں نے خواتین کا روپ دھار رکھا تھا اور پارلیمنٹ کے مرکزی دروازے کے قریب ایک نے خود کو اڑا لیا اور دوسرے کو سکیورٹی نے مار گرایا۔ واقعہ کے پانچ گھنٹے بعد ایران کی خبر رساں ایجنسی سے دستیاب اطلاع کے مطابق پارلیمنٹ پر حملہ کرنے والے چار افراد کو مار گرانے اور کارروائی ختم ہونے کی اطلاع جاری کی گئی۔ حملے کے وقت پارلیمنٹ میں موجود ایک صحافی نے کہا کہحملے کے وقت وہ پارلیمنٹ میں ہی موجود تھا۔ وہاں سب ڈرے ہوئے اور حیران تھے۔
نائب وزیر داخلہ نے بتایا کہ حملے کے کچھ دیر بعد ایران کے جنوبی شہر میں ایک اور خود کش حملہ آور نے جنوبی تہران میں آیت اللہ خمینی کی قبر کے پاس خود کو اڑا لیا۔ دوسرے حملہ آور کو سیکورٹی اہلکاروں نے مار گرایا۔ خفیہ محکمہ کے وزیر نے بتایا کہ ملک میں تیسری جگہ حملے کی منصوبہ بندی کرنے والے دہشت گردوں کی تیسری ٹیم کو گرفتار کر لیا گیا ہے۔ اگرچہ اس کے بارے میں تفصیلی معلومات نہیں دی گئی۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Death toll rises to 13 in iran twin terror attacks in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News

Leave a Reply