ہندوستان نے ڈوکلام تعطل سے سبق لے لیا ہوگا:چینی وزیر خارجہ

بیجنگ:وزیر اعظم نریندر مودی کے دورہ چین سے ایک ہفتے پہلے چین کے وزیر خارجہ وانگ یی نے بدھ کے روز کہا کہ چین کو امید ہے کہ ڈوکلام تعطل سے ہندوستان نے سبق لیا ہوگا اور آئندہ ا یسے حالات پیدا نہیں ہونے دے گا۔ انہوں نے اس تنازعہ کے طویل مدتی حل کی بھی خواہش ظاہر کی اور کہا کہ دونوں ممالک کے درمیان تعاون کے بھی بے پناہ امکانات ہیں۔ مسٹر وانگ نے کہا کہ دو طاقتور پڑوسیوں کے درمیان اختلافات ہونا عام بات ہے لیکن اہم بات یہ ہے کہ ہندوستان اور چین نے اپنے مسائل کو مناسب جگہ پر رکھا اور ا نہیں باہمی احترام اور دونوں ممالک کے رہنماوں کی رضامندی کی بنیاد پر صحیح طریقے سے نمٹایا۔ انہوں نے کہا کہ ہندوستان اور چین کے درمیان تعاون کےبے پناہ امکانات ہیں لیکن انہوں نے اس سلسلے میں کوئی تفصیل نہیں بتائی۔ واضح رہے کہ ہندوستان اور چین کی فوج کے درمیان ڈوکلام میں ڈھائی ماہ سے جاری تعطل گزشتہ پیر کو ختم ہو گیا ہے اور وزیر اعظم مودی شیامین میں آئندہ اتوار کو شروع ہونے والی برکس کانفرنس میں حصہ لینے کے لئے یہاں آ رہے ہیں۔ جون میں بھوٹان اور چین کے درمیان متنازعہ ڈوکلام علاقے میں چین کی طرف سے یکطرفہ طورپر سڑک کی تعمیر کی کوشش پر بھوٹانی فوج نے احتجاج کیا تھا اور چینی فوج کے نہیں ماننے پر بھوٹانی فوج کی درخواست پر ہندوستانی فوج نے 16 جون کو پیش قدمی کر کے چینی فوج کو روک دیا تھا۔ جس کے بعد گزشتہ ڈھائی ماہ میں دونوں ممالک کی افواج کے آمنے سامنے آجانے سے دنیا کی دو ابھرتی اقتصادی طاقتوں کے درمیان شدید کشیدگی پیدا ہو گئی تھی۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Chinas foreign minister hopes doklam wont repeat calls for long term solution in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News

Leave a Reply